شہر قائدمیں قتل وغارت اور لاشیں ملنے کا سلسلہ جاری،فائرنگ اور پرتشددواقعات میں ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
بدھ جنوری

مزید اہم خبریں

وقت اشاعت: 22/01/2014 - 20:52:47 وقت اشاعت: 22/01/2014 - 20:52:47 وقت اشاعت: 22/01/2014 - 20:52:47 وقت اشاعت: 22/01/2014 - 20:48:19 وقت اشاعت: 22/01/2014 - 20:48:19 وقت اشاعت: 22/01/2014 - 20:48:19 وقت اشاعت: 22/01/2014 - 20:43:27 وقت اشاعت: 22/01/2014 - 20:31:13 وقت اشاعت: 22/01/2014 - 20:31:13 وقت اشاعت: 22/01/2014 - 20:31:13 وقت اشاعت: 22/01/2014 - 19:39:53
پچھلی خبریں - مزید خبریں

کراچی

شہر قائدمیں قتل وغارت اور لاشیں ملنے کا سلسلہ جاری،فائرنگ اور پرتشددواقعات میں ایک خاتون سمیت مزید14افرادکوقتل کردیاگیا ،لیاری میں رینجرز اور پولیس کے جرائم پیشہ افراد کیخلاف آپریشن کے دوران گینگ وار کے مبینہ کارندے سمیت 2ملزمان مارے گئے

کراچی(اُردو پوائنٹ اخبار تازہ ترین۔22 جنوری ۔2014ء)شہر قائدمیں قتل وغارت اور لاشیں ملنے کا تسلسل جاری بدھ کو فائرنگ اور پرتشددواقعات میں ایک خاتون سمیت مزید14افرادکوقتل کردیاگیا لیاری میں رینجرز اور پولیس کے جرائم پیشہ افراد کے خلاف آپریشن کے دوران گینگ وار کے مبینہ کارندے سمیت 2ملزمان مارے گئے۔ پولیس کے مطابق لیاری کے علاقے بغدادی میں گینگ وار اور جرائم پیشہ گروہ سے وابستہ ملزمان کی گرفتاریوں کے لئے پولیس اور رینجرز نے آپریشن کیا،جس کے دوران ایک گینگ وار سے وابستہ مبینہ ملزم بہرام مارا گیا۔

پولیس کا دعوی ہے کہ ملزم بہرام لیاری گینگ وار کے وصی اللہ لاکھو گروپ سے وابستہ اور پولیس کو قتل ،اقدام قتل ،اغواء سمیت کئی مقدمات میں مطلوب تھا، جس کی لاش کو پولیس کارروائی کے لئے سول اسپتال منتقل کردیا گیا ہے۔ملزم کے قبضے سے ایک ایس ایم جی اور دو دستی برآمد ہوئے ۔لیاری گینگ وار کے کارندے بہرام کی ہلاکت کے بعد لیاری میدان جنگ میں بن گیا اور دو گروہوں کے درمیان مورچہ بند فائرنگ اور دستی بم حملوں کا آزادانہ استعمال شروع ہوگیا ۔

تصادم کے دوران جونا مسجد لیاری ٹاوٴن میں دستی بم حملے میں 35سالہ رقیہ زوجہ مختار علی ، اس کا بیٹا 12سالہ مدد علی ولد مختار ،2سالہ تبسم دختر نجیب اور 22سالہ نامعلوم نوجوان جاں بحق ہوگئے ۔جبکہ دونوں گروپوں کے درمیان تصادم کے نتیجے میں 35سالہ گل محمد ولد جمعہ بلوچ ،28سالہ وقاص احمد ولی عقیل احمد ،گلستان کالونی بہار کالونی میں کے ایس اسلامیہ اسکول کا طالب علم 11سالہ شفیع اللہ ولد حضرت شاہ سمیت متعد افراد زخمی ہوگئے ۔

دونوں گروپوں کے درمیان مورچہ بند کا فائرنگ کا سلسلہ رات گئے تک جاری رہا ،جس سے علاقہ اپنے گھروں میں محصور ہوگئے ۔واقعہ کے بعد رینجرز اور پولیس نے علاقہ کا محاصرہ کرلیا تاہم تاحال کسی گرفتاری کی اطلاع نہیں ملی۔میمن گوٹھ تھانے کی حدود گلشن حدید کے لنک روڈ کی جھاڑیوں سے 4افراد کی تشدد زدہ لاشیں برآمد ہوئی ہیں۔ اس ضمن میں پولیس کا کہنا ہے کہ ابتدائی تحقیقات کے مطابق مقتولین کو تشدد کے بعد گولیاں مار کر قتل کیا گیا

مکمل خبر پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

22/01/2014 - 20:48:19 :وقت اشاعت