غیر قانونی گیس سپلائی کی سزاگھریلو صارفین، سی این جی اور صنعتیں بھگت رہی ہیں،غیاث ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
منگل جنوری

اسلام آباد

غیر قانونی گیس سپلائی کی سزاگھریلو صارفین، سی این جی اور صنعتیں بھگت رہی ہیں،غیاث پراچہ ،نجی گیس کمپنیوں کی سازشیں گیس بحران حل کرنے میں بڑی رکاوٹ قرارہیں،وزیر اعظم صورتحال کا نوٹس لیں،چیئرمین سی این جی ایسوسی ایشن

کراچی(اُردو پوائنٹ اخبار تازہ ترین۔21 جنوری ۔2014ء) چیئرمین سپریم کونسل آل پاکستان سی این جی ایسوسی ایشن غیاث عبداللہ پراچہ نے کہا ہے کہ گیس کے شعبہ میں کام کرنے والی درجن بھر مقامی اور غیر ملکی کمپنیاں، نا اہل بیوروکریسی اور گیس کی غیر قانونی سپلائی پاکستان میں گیس بحران کی ذمہ دار ہیں۔وزیر اعظم صورتحال کا نوٹس لے کر اصلاح احوال کریں تاکہ گیس بحران ختم ہو اور سی این جی، گھریلو صارفین اورصنعتوں کے مسائل ختم ہو سکیں۔

غیاث پراچہ نے یہاں جاری ہونے والے ایک بیان میں کہا کہ گیس کمپنیوں کے درمیان ایک عرصہ سے زبردست رسہ کشی جاری ہے جس نے معیشت اور عوام کو یرغمال بنا رکھا ہے۔ایک کمپنی کو اگر کسی اہم پراجیکٹ کا ٹھیکہ مل جائے تو دوسری کمپنیاں بیوروکریسی اور این جی اوز کے زریعے یا عدالتوں میں مقدمات دائر کر کے کام رکوا دیتی ہیں جس کے بعد منصوبہ سے محروم رہنے والی کمپنی حساب چکانے کے لئے سازشوں کا جال پھیلا دیتی ہے جبکہ بیوروکریسی ایسے موقعوں کی منتظر رہتی ہے۔

مکمل خبر پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

21/01/2014 - 18:57:59 :وقت اشاعت

:متعلقہ عنوان