کراچی ،پولیو ورکرز نشانے پر ،قیوم آباد میں فائرنگ سے 2خواتین رضاکاروں سمیت 3افراد ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
منگل جنوری

مزید اہم خبریں

وقت اشاعت: 21/01/2014 - 18:43:00 وقت اشاعت: 21/01/2014 - 18:42:15 وقت اشاعت: 21/01/2014 - 18:42:15 وقت اشاعت: 21/01/2014 - 18:42:15 وقت اشاعت: 21/01/2014 - 18:40:45 وقت اشاعت: 21/01/2014 - 18:40:45 وقت اشاعت: 21/01/2014 - 17:51:42 وقت اشاعت: 21/01/2014 - 17:51:42 وقت اشاعت: 21/01/2014 - 17:51:42 وقت اشاعت: 21/01/2014 - 17:37:57 وقت اشاعت: 21/01/2014 - 17:37:57
پچھلی خبریں - مزید خبریں

کراچی

کراچی ،پولیو ورکرز نشانے پر ،قیوم آباد میں فائرنگ سے 2خواتین رضاکاروں سمیت 3افراد جاں بحق ،قیوم آباد اے ایریا گلی نمبر6 میں انسداد پولیو ٹیم قطرے پلانے میں مصروف تھی کہ 2موٹر سائیکلوں پر4 مسلح افراد نے اندھا دھند فائرنگ کر دی،پولیو ورکرزنے حملے کے بعد پولیو مہم فوری طور پر روک دی، حملوں کے خدشات کے باوجود کارکنوں کو سیکیورٹی فراہم نہیں کی گئی،خیرالنساء،حیرانی ہے پولیو ورکرز کیساتھ کوئی بھی پولیس اہلکار موجود نہیں تھا ، تحقیقات کرکے غفلت برتنے والے اہلکاروں کیخلاف کارروائی کی جائیگی،ایس ایس پی ایسٹ

کراچی(اُردو پوائنٹ اخبار تازہ ترین۔21 جنوری ۔2014ء)کراچی کے علاقے قیوم آباد میں انسداد پولیو ٹیم پر فائرنگ کے نتیجے میں 2 خواتین رضاکاروں سمیت 3 افراد جاں بحق جبکہ ایک بچہ زخمی ہو گیاہے۔پولیو ورکرزنے حملے کے بعد پولیو مہم فوری طور پر روک دی ہے،انسداد پولیو ورکرز ایسو سی ایشن سندھ نے کہاہے کہ سیکیورٹی اور حملوں کے خدشات کے باوجود ہمارے کارکنوں کو سیکیورٹی فراہم نہیں کی گئی۔

پولیس ذرائع کے مطابق کراچی کے علاقے قیوم آباد اے ایریا گلی نمبر6 میں انسداد پولیو ٹیم قطرے پلانے میں مصروف تھی کہ اس دوران دو موٹر سائیکلوں پر چار مسلح افراد نے ان پر اندھا دھند فائرنگ کر دی جس کے نتیجے میں ایک بچہ اور ایک شخص سمیت 2خواتین پولیو رضاکار شدید زخمی ہو گئیں، زخمیوں کو فوری طور پر جناح اسپتال منتقل کیا گیا تاہم 2خواتین پولیو ورکر اور ایک شخص زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے جاں بحق ہو گئے، جاں بحق ہونے والوں کی شناخت انیتا، اکبری اور فہد کے ناموں سے ہوئی ہے۔

عینی شاہدین کے مطابق پولیو ٹیم کے ساتھ پولیس کا کوئی بھی نمائندہ موجود نہیں تھا جس کی وجہ سے ملزمان حملے کے بعد آسانی سے فرار ہونے میں کامیاب ہو گئے۔واقعہ کی اطلاع ملنے پر پولیس نے موقع پر پہنچ کر تفتیش شروع کردی جبکہ انسداد پولیو ایسوسی ایشن نے حملے کے بعد سندھ بھر میں انسداد پولیو مہم کا بائیکاٹ کردیا ہے ۔چیئرپرسن سندھ پولیو ورکرز ایسوسی ایشن صدر خیر النسا نے کہاہے کہ مطالبات کو بالائے طاق رکھ کر مہم میں حصہ لیا تھا ۔

پولیو ورکرز مارا جاتا ہے اس کا

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

21/01/2014 - 18:40:45 :وقت اشاعت