خصوصی عدالت ، چیف جسٹس سے مشاورت نہیں ہو نی چاہئے تھی،انور منصور
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
پیر جنوری

مزید اہم خبریں

وقت اشاعت: 20/01/2014 - 13:42:22 وقت اشاعت: 20/01/2014 - 13:40:49 وقت اشاعت: 20/01/2014 - 13:40:49 وقت اشاعت: 20/01/2014 - 13:40:49 وقت اشاعت: 20/01/2014 - 13:13:22 وقت اشاعت: 20/01/2014 - 13:13:22 وقت اشاعت: 20/01/2014 - 13:13:22 وقت اشاعت: 20/01/2014 - 12:21:53 وقت اشاعت: 20/01/2014 - 12:21:53 وقت اشاعت: 20/01/2014 - 12:20:05 وقت اشاعت: 20/01/2014 - 12:20:05
پچھلی خبریں - مزید خبریں

اسلام آباد

اسلام آباد شہر میں شائع کردہ مزید خبریں

وقت اشاعت: 19/01/2017 - 11:05:05 وقت اشاعت: 19/01/2017 - 11:05:06 وقت اشاعت: 19/01/2017 - 11:05:09 وقت اشاعت: 19/01/2017 - 11:05:16 وقت اشاعت: 19/01/2017 - 11:11:11 وقت اشاعت: 19/01/2017 - 11:11:13 اسلام آباد کی مزید خبریں

خصوصی عدالت ، چیف جسٹس سے مشاورت نہیں ہو نی چاہئے تھی،انور منصور

span id=\"ContentPlaceHolder1_lblNewsDetail\" class=\"lblUrduNewsDescription\" dir=\"rtl\">اسلام آباد(اُردو پوائنٹ تازہ ترین اخبار۔ 20جنوری 2014ء)پرویز مشرف غداری کیس میں ان کے وکیل انور منصور نے دلائل دیتے ہوئے کہا کہ خصوصی عدالت کے قیام کیلئے چیف جسٹس سے مشاورت نہیں ہونا چاہیے تھی۔ ججز نامزدگی کا اختیار صرف وفاقی حکومت کو ہے پرویز مشرف غداری کیس کی خصوصی عدالت میں سماعت کے دوران پرویز مشرف کے وکیل انور منصور نے دلائل جاری رکھے۔

انھوں نے کہا کہ خصوصی عدالت کیلئے ججز کی نامزدگی کا اختیار صرف وفاقی حکومت کو ہے ، جس پر جسٹس فیصل عرب نے استفسار کیا کہ کیا آپ یہ کہنا چاہتے ہیں کہ ججز نامزدگی کیلئے مشاورت بے معنی ہے، جس پر انور منصور نے جواب دیا کہ چیف جسٹس سے مشاورت نہیں ہونا چاہیے تھی، صرف

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

20/01/2014 - 13:13:22 :وقت اشاعت

:متعلقہ عنوان