علماء دہشت گردی کے خاتمے ،معاشرے میں قیام امن،بھائی چارہ اوریکجہتی کے فروغ کیلئے ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
اتوار جنوری

مزید قومی خبریں

وقت اشاعت: 19/01/2014 - 23:48:53 وقت اشاعت: 19/01/2014 - 23:10:52 وقت اشاعت: 19/01/2014 - 20:56:51 وقت اشاعت: 19/01/2014 - 20:56:20 وقت اشاعت: 19/01/2014 - 20:46:25 وقت اشاعت: 19/01/2014 - 20:35:59 وقت اشاعت: 19/01/2014 - 20:32:44 وقت اشاعت: 19/01/2014 - 20:32:44 وقت اشاعت: 19/01/2014 - 19:59:04 وقت اشاعت: 19/01/2014 - 15:27:56 وقت اشاعت: 19/01/2014 - 14:20:40
- مزید خبریں

کوئٹہ

کوئٹہ شہر میں شائع کردہ مزید خبریں

وقت اشاعت: 19/01/2017 - 14:56:37 وقت اشاعت: 19/01/2017 - 16:17:21 وقت اشاعت: 19/01/2017 - 16:33:58 وقت اشاعت: 19/01/2017 - 16:38:13 وقت اشاعت: 19/01/2017 - 16:45:01 وقت اشاعت: 19/01/2017 - 16:45:04 کوئٹہ کی مزید خبریں

علماء دہشت گردی کے خاتمے ،معاشرے میں قیام امن،بھائی چارہ اوریکجہتی کے فروغ کیلئے اپنا کرداراداکریں،وزیراعلیٰ بلوچستان،اربوں روپے قیام امن کیلئے خرچ ہورہے ہیں،تعلیم ،عوامی بہبود کے منصوبوں پر خرچ کئے جائیں تو انقلاب برپاہوسکتاہے،اسلامی تعلیمات اوراحکام خداوندی کے راہنما اصولوں کو بنیاد بنا کر زندگی گزاریں تو مثالی معاشرے کے قیام میں کامیاب ہونگے ،ڈاکٹرعبدالمالک بلوچ کا سیرت النبیکا امت کیلئے پیغام"کانفرنس سے خطاب

کوئٹہ(اُردو پوائنٹ اخبار تازہ ترین۔19 جنوری ۔2014ء) وزیراعلیٰ بلوچستان ڈاکٹرعبدالمالک بلوچ نے مختلف مکاتب فکر سے تعلق رکھنے والے علمائے کرام سے کہاہے کہ وہ دہشت گردی کے خاتمے ،معاشرے میں قیام امن،بھائی چارہ اوریکجہتی کے فروغ کیلئے اپنا مؤثر کرداراداکریں۔انہوں نے کہاکہ آج اربوں روپے قیام امن کیلئے خرچ ہورہے ہیں اگریہی تعلیم ،عوامی بہبود کے منصوبوں پر خرچ کئے جائیں تو انقلاب برپاہوسکتاہے۔

وہ اتوار کے روزادارہ اموراسلامی بلوچستان کے زیراہتمام "سیرت النبیکا امت کیلئے پیغام"کانفرنس سے خطاب کررہے تھے،وزیراعلیٰ نے کہاکہ مذہب ،قبائلیت اورقومیت کے نام پر امن کی بھیک مانگتاہوں ،انہوں نے کہا کہ موجودہ حکومت کاایجنڈا امن کاقیام ہے اگرہم نے اپنایہ ہدف حاصل کرلیاتوہم سمجھیں گے کہ ہم کامیاب ہوگئے،انہوں نے کہاکہ اس وقت دہشت گردی نے ہمیں اپنی لپیٹ میں لے رکھاہے اورحکومت کی تمام تر توجہ اس مسئلے پر ہے ،انہوں نے کہاکہ علمائے کرام اپنے متحرک کردار کے ذریعے حکومت کی قیام امن کی کوششوں میں مفید تعاون کرسکتے ہیں۔

حضورپاک کی سیرت اورحیات طیبہ ہم سب کیلئے زندگی گزارنے کابہترین نمونہ ہے لہٰذااگرہم اسلامی تعلیمات اوراحکام خداوندی کے راہنما اصولوں کو بنیاد بنا کر زندگی گذاریں گے تو ہم ایک مثالی معاشرے کے قیام میں کامیاب ہونگے ،انہوں نے کہاکہ ہم سب ایک رب اورنبی کے ماننے والے ہیں اوراسلام ہمیں امن ومحبت اوربھائی چارے کادرس دیتاہے لہٰذا ہم اسلامی تعلیمات کی روشنی میں اپنے اندرپائی جانے والی کمی اور کوتاہیوں کودورکرنے میں کامیاب ہوئے تو دنیاوی زندگی کے ساتھ ساتھ ہماری آخرت کی زندگی میں بھی رب پاک کے سامنے اپنے کئے ہوئے ہرعمل کی جواب دہی کے وقت سرخروہوں گے،انہوں نے کہاکہ اس مشکل مرحلے میں جہاں پورے ملک

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

19/01/2014 - 23:10:52 :وقت اشاعت

:متعلقہ عنوان