پرویز مشرف بہادر سپہ سالار تھے ، عدالت پیشی کے ڈر سے ہسپتال جا کر بیٹھنے سے نیک ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
بدھ جنوری

مزید اہم خبریں

وقت اشاعت: 15/01/2014 - 20:58:06 وقت اشاعت: 15/01/2014 - 20:58:06 وقت اشاعت: 15/01/2014 - 20:58:06 وقت اشاعت: 15/01/2014 - 20:56:14 وقت اشاعت: 15/01/2014 - 20:56:14 وقت اشاعت: 15/01/2014 - 20:56:14 وقت اشاعت: 15/01/2014 - 20:49:29 وقت اشاعت: 15/01/2014 - 20:49:29 وقت اشاعت: 15/01/2014 - 20:49:29 وقت اشاعت: 15/01/2014 - 20:48:03 وقت اشاعت: 15/01/2014 - 20:48:03
پچھلی خبریں - مزید خبریں

اسلام آباد

اسلام آباد شہر میں شائع کردہ مزید خبریں

وقت اشاعت: 22/02/2017 - 11:01:42 وقت اشاعت: 22/02/2017 - 11:05:17 وقت اشاعت: 22/02/2017 - 11:05:21 وقت اشاعت: 22/02/2017 - 11:05:23 وقت اشاعت: 22/02/2017 - 11:05:27 وقت اشاعت: 22/02/2017 - 11:05:29 اسلام آباد کی مزید خبریں

پرویز مشرف بہادر سپہ سالار تھے ، عدالت پیشی کے ڈر سے ہسپتال جا کر بیٹھنے سے نیک نامی نہیں ہو گی ، اعتزاز احسن ، عدالتی اور ملکی معاملات میں فوج کی مداخلت بہت ہو چکی ،اب مداخلت ہوئی تو اپوزیشن حکومت کے ساتھ کھڑی ہو گی ، میڈیاسے گفتگو

اسلام آباد(اُردو پوائنٹ اخبار تازہ ترین۔15 جنوری ۔2014ء)سینیٹ میں قائد حزب اختلاف اعتزاز احسن نے کہا ہے کہ پرویز مشرف بہادر سپہ سالار تھے ، عدالت پیشی کے ڈر سے ہسپتال جا کر بیٹھنے سے ان کی نیک نامی نہیں ہو گی ، عدالتی اور ملکی معاملات میں فوج کی مداخلت بہت ہو چکی اب اگر ایسی مداخلت ہوئی تو اپوزیشن حکومت کے ساتھ کھڑی ہو گی۔بدھ کو سپریم کورٹ کے باہر میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے اعتزاز احسن نے کہاکہ پرویز مشرف بہادر جرنیل رہے ہیں اور ایک فرضی ہارٹ اٹیک دکھا کر ہسپتال جا کر بیٹھ جانے سے انکی نیک نامی نہیں ہو گی۔

پرویز مشرف کو خصوصی عدالت میں پیش ہو جانا چاہیے۔ عدالت پیش ہوکر وہ صفائی کے موقع کا بھرپور فائدہ اٹھائیں۔ پرویز مشرف کو عدالت میں پیش ہونا چاہئے۔ انہوں نے کہاکہ تین نومبر دو ہزار سات کی ایمرجنسی کا گزٹ پرویز مشرف کے خلاف سب سے بڑا ثبوت ہے میں اگر استغاثہ کا وکیل ہوتا تو صرف عدالت میں گزٹ کی کاپی ہی پیش کر کے معاملے کو ختم کر دیتا۔

انہوں نے کہاکہ میڈیکل رپورٹ کی بڑی اہمیت ہوتی ہے اور اس رپورٹ کو خصوصی عدالت خاطر میں لائے گی ،بیرون ملک علاج کرانے سے متعلق مریض کی کوئی صوابدید نہیں ہوتی اس طرح ہو تو ہر مجرم ملک سے باہر چلا جائے۔ اعتزاز احسن نے کہا کہ ترکی ، چلی ، میکسیکو، بنگلہ دیش، سری لنکا اور تھائی لینڈ سمیت ارجنٹائن میں سابق فوجی جرنیلوں کو ٹرائل کے بعد سزا دی گئی اور ان حکومتوں کے اس عمل کے بعد وہاں جمہوریت مضبوط ہوئی۔

انہوں نے کہا کہ پرویز مشرف کو شفاف ٹرائل کا حق ملنا چاہئے۔ میڈیکل رپورٹ جو جمع کرائی گئی اس سے پتہ چلتا ہے کہ انکو کوئی بڑی بیماری نہیں مجھے امید ہے کہ پرویز مشرف عدالتی کارروائی سے گھبرائیں گے نہیں۔ جنرل راحیل شریف کو کوئی اختیار نہیں کہ وہ پرویز مشرف کا ٹرائل ملٹری کورٹ سے کرانے کا حکم جاری کریں۔ عدالتی اور ملکی معاملات میں فوج کی مداخلت بہت ہو چکی اب اگر ایسی مداخلت ہوئی تو اپوزیشن حکومت کے ساتھ کھڑی ہو گی۔

15/01/2014 - 20:56:14 :وقت اشاعت