سینیٹ کی قائمہ کمیٹی برائے سائنس اینڈ ٹیکنالوجی نے ملک کے تمام سرکاری اداروں میں ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
بدھ جنوری

مزید اہم خبریں

وقت اشاعت: 15/01/2014 - 20:49:29 وقت اشاعت: 15/01/2014 - 20:49:29 وقت اشاعت: 15/01/2014 - 20:49:29 وقت اشاعت: 15/01/2014 - 20:48:03 وقت اشاعت: 15/01/2014 - 20:48:03 وقت اشاعت: 15/01/2014 - 20:47:02 وقت اشاعت: 15/01/2014 - 20:47:02 وقت اشاعت: 15/01/2014 - 20:45:49 وقت اشاعت: 15/01/2014 - 20:44:38 وقت اشاعت: 15/01/2014 - 20:44:38 وقت اشاعت: 15/01/2014 - 20:43:43
پچھلی خبریں - مزید خبریں

اسلام آباد

سینیٹ کی قائمہ کمیٹی برائے سائنس اینڈ ٹیکنالوجی نے ملک کے تمام سرکاری اداروں میں آڈٹ انرجی پروگرام شروع کرنے کی سفارش کردی ،موجودہ حکومت توانائی کے مسئلہ پر قابو پانے کے لئے شمسی توانائی کے منصوبوں پر بھی کام کر رہی ہے ،وفاقی وزیر زاہد خان ، پاکستان کے کل رجسٹرڈ انجینئرز کی تعداد 1لاکھ 60ہزار 390ہے ، 89ہزار 628پروفیشنل انجینئرز ہیں ، کمیٹی کو بریفنگ

ا سلام آباد (اُردو پوائنٹ اخبار تازہ ترین۔15 جنوری ۔2014ء) سینیٹ کی قائمہ کمیٹی برائے سائنس اینڈ ٹیکنالوجی نے ملک کے تمام سرکاری اداروں میں آڈٹ انرجی پروگرام شروع کرنے کی سفارش کردی ہے جبکہ وفاقی وزیر سائنس اینڈ ٹیکنالوجی زاہد خامد نے کمیٹی کو بتایاکہ موجودہ حکومت توانائی کے مسئلہ پر قابو پانے کے لئے شمسی توانائی کے منصوبوں پر بھی کام کر رہی ہے ۔

قائمہ کمیٹی کا اجلاس سینیٹر پروفیسر ساجد میر کی زیر صدارت بدھ کو پارلیمنٹ ہاؤس اسلام آباد میں ہوا۔ اجلاس میں پاکستان انجینئرنگ کونسل کی کارکردگی اور انجنئیرنگ کے شعبے کے فروغ کی پالیسی کا جائزہ لیا گیا ۔سیکریٹری پاکستان انجینئرنگ کونسل نے کمیٹی کوبتایا کہ پاکستان کے کل رجسٹرڈ انجینئرز کی تعداد 1لاکھ 60ہزار 390ہے اور ان میں سے 89ہزار 628پروفیشنل انجینئرز ہیں اور 70ہزار 762رجسٹرڈ انجینئرز ہیں پاکستان میں سالانہ 12ہزار انجینئرز بن رہے ہیں ۔

توانائی کے بحران کے حل کے حوالے سے انہوں نے کمیٹی کو بتایا کہ ادارے میں 178کلو واٹ کی صلاحیت کے حامل آن گریڈ سولر سسٹم لگایاگیا ہے اور انرجی آڈٹ پروگرام کے تحت اپنی چالیس فیصد بجلی کی کھپت بچائی ہے ۔اجلاس میں قائمہ کمیٹی نے تمام سرکاری اداروں میں آڈٹ انرجی پروگرام لگانے کی سفارش کی جس پر وفاقی وزیر زاہد خامد نے کہا کہ اس منصوبے پر کام ہور ہا ہے ۔

پاکستان انجینئرنگ کونسل کے حکام نے قائمہ کمیٹی سے سفارش کی کہ ان کا سروس سٹرکچر

مکمل خبر پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

15/01/2014 - 20:47:02 :وقت اشاعت