ہم نے کسی کو کشمیریوں کی خواہشات کے منافی حل تجویزکرنے کا مینڈیٹ نہیں دیا‘سید ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
پیر جنوری

ہم نے کسی کو کشمیریوں کی خواہشات کے منافی حل تجویزکرنے کا مینڈیٹ نہیں دیا‘سید علی گیلانی

سرینگر(اُردو پوائنٹ تازہ ترین اخبار۔ 13جنوری 2014ء)بزرگ کشمیری رہنماء سید علی گیلانی نے کہا ہے کہ ہم نے کسی کو یہ منڈیٹ نہیں دیا ہے کہ وہ ہماری خواہشات اور قربانیوں کے منافی کوئی حل تجویز کریں‘ باطل قوتوں کا مقابلہ کرنا ہے جو اسلام کو تسلیم نہیں کرتے جو مسلمانوں کو آپس میں لڑاتے ہیں‘ پاکستان‘ بھارت اور جموں وکشمیر مسئلہ کشمیر کے 3فریق ہیں اور تنازعہ کشمیر کو حل کرنے میں بھارت رکاوٹ ہے۔

کشمیر کو مہاراجہ ہری سنگھ اور اس وقت کی لیڈرشپ کی کوتاہ اندیشی کے سبب بھارت کے ساتھ شامل کیاگیا-ووٹ ڈالنے والے لوگ اپنی آخرت کو تباہ کرتے ہیں۔ ووٹ ڈالنے سے بھارت عالمی سطح پر یہ ڈھنڈورہ پیٹتا ہے کہ ریاست جموں و کشمیر میں عوام ہندوستان کے ساتھ ہیں- مسئلہ کشمیر لٹکانے سے آج تک لاکھ سے زائدکشمیری شہید ہوگئے اور اگر مسئلہ کشمیر حل ہوتا تو اتنی بڑی تعداد میں انسانی جانوں کا ضیاں نہ ہوتا- آج باطل قوتیں اسلام کو تسلیم نہیں کرتیں وہ مسلمانوں کو آپس میں لڑاتے ہیں۔

ان خیالات کا اظہار انہوں نے ربیع الاول کی مناسبت سے حیدرپورہ میں منعقدہ سیمینار سے ٹیلی فونک خطاب کرتے ہوئے کیا- انہوں نے کہا کہ مسئلہ کشمیر کے تین فریق ہیں پاکستان‘ بھارت اور کشمیری-کشمیری عوام کوئی خفیہ ڈیل قبول نہیں کرینگے،تقسیم کشمیر کی کسی بھی کوشش کا ڈٹ کر مقابلہ کیا جائے گا،آزادی کے حقیقی مفہوم کو سمجھنے کی ضرورت ہے،بھارتی فوج نے کشمیر پر زبردستی قبضہ کر رکھا ہے عالمی برادری کو چاہئے کہ وہ کشمیریوں کی آواز کو سنے -اقوام متحدہ اپنی ہی قراردادوں پر عملدرآمد کرنے میں ناکام ہے جو افسوسناک ہے۔

انہوں نے کہاکہ آج مسلمان اپنے ہی مسلمان بھائی کا خون بہارہا ہے جو کہ دل آزاری ہے۔ انہوں نے کہاکہ مسلمانوں کی ترجیحات مسلکی اور گروہی اختلافات کی بجائے دین کی بنیاد پر ملت کو متحدہ کرکے شیعہ سنی اتحاد کو قائم کرنا ہے۔سید علی گیلانی نے کہاکہ بھارت کے قبضہ ختم ہونے کے بعد جو آزادی آئے گی اگر وہ سوشلزم، سیکولرزم، کمیونزم یا کسی خاندانی راج کا سبب بنا تو اس آزادی کا کوئی فائدہ نہیں ، لہذا حقیقی آزادی کے تصور کو اسوہ حسنہ کے تناظر میں سمجھنا ہوگا۔



اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

13/01/2014 - 13:44:41 :وقت اشاعت