الیکشن ٹریبونل نے حلقہ پی کے 86 سوات سے (ن )لیگ کے امیدوار قیموس خان کی کامیابی کو ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
جمعرات جنوری

مزید اہم خبریں

وقت اشاعت: 09/01/2014 - 16:51:44 وقت اشاعت: 09/01/2014 - 16:50:23 وقت اشاعت: 09/01/2014 - 16:50:23 وقت اشاعت: 09/01/2014 - 16:50:23 وقت اشاعت: 09/01/2014 - 16:48:25 وقت اشاعت: 09/01/2014 - 16:48:25 وقت اشاعت: 09/01/2014 - 16:48:25 وقت اشاعت: 09/01/2014 - 16:40:33 وقت اشاعت: 09/01/2014 - 16:39:08 وقت اشاعت: 09/01/2014 - 16:39:08 وقت اشاعت: 09/01/2014 - 16:39:08
پچھلی خبریں - مزید خبریں

سوات

الیکشن ٹریبونل نے حلقہ پی کے 86 سوات سے (ن )لیگ کے امیدوار قیموس خان کی کامیابی کو کالعدم قرار دیدیا ،رکنیت معطل

سوات (اُردو پوائنٹ تازہ ترین اخبار۔ 9جنوری 2014ء) الیکشن ٹریبونل نے خیبر پختون خوا کے حلقے پی کے 86 سوات سے مسلم لیگ (ن )کے امیدوار قیموس خان کی کامیابی کو کالعدم قرار دیتے ہوئے ان کی رکنیت معطل کر دی ہے۔جمعرات کو عوامی نیشنل پارٹی کے رہنما ڈاکٹر حیدر علی خان نے مسلم لیگ (ن )کے امیدوار قیموس خان کے خلاف مئی 2013 کے عام انتخابات میں دھاندلی کا الزام لگاتے ہوئے انتخابی نتائج کو چیلنج کیا تھا جس پر الیکشن ٹریبونل نے پی کے 86 سوات کے نتائج کو کالعدم قرار دیتے ہوئے حلقے میں دوبارہ انتخابات کرانے کا حکم دیا ہے جس سے (ن )لیگ سے ایم پی اے کی رکنیت معطل ہو گئی ہے الیکشن ٹریبونل پشاور نے پی کے 86 سوات سات میں دوبارہ الیکشن کرانے کا حکم دیا ۔

واضح رہے کہ عام انتخابات میں پی کے 86 سے حکمراں جماعت مسلم لیگ ن کے رہنما قیموس خان 10687 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے ، دوسرے نمبر پر جمعیت علمائے اسلام کے علی شاہ رہے جنہوں نے 10302 ووٹ حاصل کئے اور اے این پی کے رہنما ڈاکٹر حیدر علی نے 10028 ووٹ حاصل کئے۔

09/01/2014 - 16:48:25 :وقت اشاعت

:متعلقہ عنوان