اسرائیلی حکومت کا بیت المقدس میں ہزاروں نئے مکان تعمیر کرنے کا منصوبہ
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
منگل جنوری

مزید بین الاقوامی خبریں

وقت اشاعت: 07/01/2014 - 21:21:32 وقت اشاعت: 07/01/2014 - 19:56:02 وقت اشاعت: 07/01/2014 - 18:57:41 وقت اشاعت: 07/01/2014 - 14:03:22 وقت اشاعت: 07/01/2014 - 14:02:41 وقت اشاعت: 07/01/2014 - 14:02:41 وقت اشاعت: 07/01/2014 - 14:02:41 وقت اشاعت: 07/01/2014 - 13:48:55 وقت اشاعت: 07/01/2014 - 13:48:36 وقت اشاعت: 07/01/2014 - 13:48:36 وقت اشاعت: 07/01/2014 - 13:48:36
- مزید خبریں

اسرائیلی حکومت کا بیت المقدس میں ہزاروں نئے مکان تعمیر کرنے کا منصوبہ

مقبوضہ بیت المقدس (اُردو پوائنٹ تازہ ترین اخبار۔ 7جنوری 2014ء) اسرائیلی حکومت نے بیت المقدس میں ہزاروں نئے مکان تعمیر کرنے کا منصوبہ بنایا ہے، اسرائیلی وزارت داخلہ کے زیر اہتمام آباد کاری ومنصوبہ بندی کمیٹی نے کہا ہے کہ حکومت نے شمالی بیت المقدس میں راس شعفاط کے مقام پر 1935 مکانات تعمیر کرنے کا منصوبہ بنایا ہے ، مکانات کی تعمیر کی تیاری 2011ء میں شروع کی گئی لیکن اس پر کام روک دیا گیا تھا ، 2012ء میں شلومو کالونی میں بھی 387مکانوں کی تعمیر کا منصوبہ بنایا گیا تھا جس پر عملدرآمد کا فیصلہ کیا گیا ہے ۔

صہیونی وزارت داخلہ کی ذیلی کے مطابق شمالی بیت المقدس میں نئے مکانات کی تعمیر کیلئے ٹینڈر پہلے ہی طلب کئے جاچکے ہیں، نئے منصوبے میں کئی منزلہ رہائشی عمارتیں،

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

07/01/2014 - 14:02:41 :وقت اشاعت

:متعلقہ عنوان