حکومت پرویز مشرف کیخلاف غداری کے مقدمہ میں قانون اور آئین کے مطابق عمل کریگی ، ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
منگل جنوری

مزید اہم خبریں

وقت اشاعت: 07/01/2014 - 13:59:58 وقت اشاعت: 07/01/2014 - 13:59:58 وقت اشاعت: 07/01/2014 - 13:57:42 وقت اشاعت: 07/01/2014 - 13:56:24 وقت اشاعت: 07/01/2014 - 13:56:24 وقت اشاعت: 07/01/2014 - 13:56:24 وقت اشاعت: 07/01/2014 - 13:03:50 وقت اشاعت: 07/01/2014 - 13:03:50 وقت اشاعت: 07/01/2014 - 12:56:45 وقت اشاعت: 07/01/2014 - 12:17:04 وقت اشاعت: 07/01/2014 - 12:14:46
پچھلی خبریں - مزید خبریں

اسلام آباد

حکومت پرویز مشرف کیخلاف غداری کے مقدمہ میں قانون اور آئین کے مطابق عمل کریگی ، وزیر اطلاعات پرویز رشید

اسلام آبا د (اُردو پوائنٹ تازہ ترین اخبار۔ 7جنوری 2014ء) وفاقی وزیر اطلاعات و نشریات سینیٹر پرویز رشید نے کہا ہے کہ حکومت پرویز مشرف کیخلاف غداری کے مقدمہ میں قانون اور آئین کے مطابق عمل کریگی ،ہر ملک اپنے آئین کے مطابق کام کرتا ہے ، حکومت پر سعودی عرب، برطانیہ یا امریکا سمیت کسی بھی غیر ملکی طاقت کا کوئی دباؤ نہیں ، پرویز مشرف کے حامیوں کو دلیل سے بات کرنی چاہیے ، اپنے دلائل عدالت میں دینے چاہئیں۔

ایک انٹرویو میں وفاقی وزیر اطلاعات نے کہا کہ حکومت پر سعودی عرب، برطانیہ یا امریکا سمیت کسی بھی غیر ملکی طاقت کا کوئی دباؤ نہیں ہے کیونکہ ہر ملک کو علم ہے کہ ہر ملک اپنے آئین کے مطابق کام کرتا ہے۔ ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ پرویز مشرف کے مقدمہ سے عدالت نمٹ رہی ہے نہ کہ حکومت اور حکومت کے کردار بارے سوال اٹھانے والوں کو ملکی قانون، عدلیہ اور انتظامیہ کے اختیارات سے آگاہ ہونا چاہئے۔

انہوں نے کہا کہ یہ معاملہ عدالت میں ہے اور مشرف کے قصور وار یا بے قصور ہونے بارے فیصلہ عدالت ہی کرے گی۔ مشرف کو بیرون ملک سفر کی کلازت کے حوالہ سے پوچھے گئے سوال کا جواب دیتے ہوئے وزیر اطلاعات نے کہا کہ حکومت کو اس قسم کی کلازت دینے کا اختیار نہیں ہے حکومت اس ضمن میں 2009ء میں سپریم کورٹ کی طرف سے دیئے گئے فیصلہ کے مطابق کارروائی کر رہی ہے۔

وزیر اطلاعات و نشریات پرویز رشیدنے کہا کہ حکومت نے سپریم کورٹ کے فیصلہ کے مطابق غداری کا مقدمہ چلانے کا اقدام اٹھایا۔ انہوں نے کہا کہ ماضی میں میڈیا حکومتوں پر الزام عائد کرتا رہا ہے کہ آئین کی خلاف ورزی کرنے والوں کیخلاف کارروائی نہیں کی جاتی اور مشرف کیخلاف مقدمہ کے آغاز سے یہ موقف رکھنے والوں کی تسلی ہو گی اور آئین کی بار بار تنسیخ کی حوصلہ شکنی ہو گی۔ انہوں نے کہا کہ پرویز مشرف کے حامیوں کو دلیل سے بات کرنی چاہئے اور اپنے دلائل عدالت میں دینے چاہئیں۔ انہوں نے کہا کہ پرویز مشرف کو سزا دینے کے متعلق فیصلہ عدالت نے کرنا ہے اور حکومت اس ضمن میں قانون اور آئین کے مطابق عمل کریگی۔

07/01/2014 - 13:56:24 :وقت اشاعت