پاکستان ،شدت پسندی کی کارروائیوں میں نو اور ہلاک ہونے والوں کی تعداد میں 19 فیصد ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
پیر جنوری

مزید اہم خبریں

وقت اشاعت: 06/01/2014 - 16:59:31 وقت اشاعت: 06/01/2014 - 16:59:31 وقت اشاعت: 06/01/2014 - 16:59:31 وقت اشاعت: 06/01/2014 - 16:58:11 وقت اشاعت: 06/01/2014 - 16:58:11 وقت اشاعت: 06/01/2014 - 16:58:11 وقت اشاعت: 06/01/2014 - 16:23:08 وقت اشاعت: 06/01/2014 - 16:23:08 وقت اشاعت: 06/01/2014 - 16:23:08 وقت اشاعت: 06/01/2014 - 15:12:19 وقت اشاعت: 06/01/2014 - 15:12:19
پچھلی خبریں - مزید خبریں

اسلام آباد

اسلام آباد شہر میں شائع کردہ مزید خبریں

وقت اشاعت: 17/01/2017 - 11:10:36 وقت اشاعت: 17/01/2017 - 11:10:38 وقت اشاعت: 17/01/2017 - 11:10:39 وقت اشاعت: 17/01/2017 - 10:35:10 وقت اشاعت: 17/01/2017 - 11:10:41 وقت اشاعت: 17/01/2017 - 11:10:41 اسلام آباد کی مزید خبریں

پاکستان ،شدت پسندی کی کارروائیوں میں نو اور ہلاک ہونے والوں کی تعداد میں 19 فیصد اضافہ

اسلام آباد /لندن (اُردو پوائنٹ تازہ ترین اخبار۔ 6جنوری 2014ء)پاکستان کے ایک تھنک ٹینک نے سالانہ رپورٹ میں کہا ہے کہ 2012 کے مقابلے میں پچھلے سال شدت پسندی کی کارروائیوں میں نو فیصد اور کارروائیوں میں ہلاک ہونے والوں کی تعداد میں 19 فیصد اضافہ ہوا ہے۔پاکستان انسٹیٹیوٹ فار پیس سٹڈیز کی جانب سے جاری کی گئی سالانہ رپورٹ میں کہا گیا کہ 2012 کے مقابلے میں پچھلے سال خودکش حملوں میں بھی 39 فیصد اضافہ ہوا۔

سالانہ رپورٹ کے مطابق گزشتہ سال شدت پسندوں اور فرقہ وارانہ نوعیت کے 1717 حملے ہوئے جن میں 2451 لوگوں کی ہلاکت ہوئی۔رپورٹ میں کہا گیا کہ کالعدم تنظیم تحریک طالبان پاکستان نے ملک میں عدم استحکام پھیلانے میں اہم کردار ادا کیا۔ رپورٹ کے مطابق پاکستان کی سکیورٹی فورسز کے آپریشنز اور ڈرون حملوں میں اس تحریک کے کئی سرکردہ رہنما ہلاک ہوئے تاہم اس کے باوجود اس کی صلاحیت میں کمی واقع نہیں ہوئی۔

تھنک ٹینک کے مطابق تحریک طالبان پاکستان نے ملک کے پچاس اضلاع میں 645 شدت پسند کارروائیاں کیں جن میں 732 عام شہری اور 425 اہلکار ہلاک ہوئے۔رپورٹ کے مطابق ملک میں فرقہ وارانہ کارروائیوں میں بھی پچھلے سال اضافہ ہوا۔رپورٹ کے مطابق 2013 میں 220 فرقہ وارانہ پرتشدد واقعات پیش آئے جن میں 687 افراد ہلاک اور 1319 زخمی ہوئے۔رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ ہنگو، اسلام آباد اور راولپنڈی، کراچی، کوئٹہ، پشاور اور کرم ایجنسی فرقہ وارانہ کارروائیوں میں سب سے زیادہ متاثر ہوئے۔

کوئٹہ فرقہ وارانہ تشدد میں سب سے زیادہ متاثر ہوا جہاں 23 پرتشدد واقعات میں 262 افراد ہلاک ہوئے تاہم کراچی میں فرقہ وارانہ

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

06/01/2014 - 16:58:11 :وقت اشاعت

:متعلقہ عنوان