کراچی میں ٹارگٹ کلرز نے17افراد کو موت کی نیند سلا دیا
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
اتوار جنوری

مزید اہم خبریں

وقت اشاعت: 05/01/2014 - 13:02:10 وقت اشاعت: 05/01/2014 - 13:00:49 وقت اشاعت: 05/01/2014 - 13:00:49 وقت اشاعت: 05/01/2014 - 12:47:58 وقت اشاعت: 05/01/2014 - 12:43:55 وقت اشاعت: 05/01/2014 - 12:43:55 وقت اشاعت: 05/01/2014 - 12:43:55 وقت اشاعت: 05/01/2014 - 12:27:48 وقت اشاعت: 05/01/2014 - 12:27:48 وقت اشاعت: 05/01/2014 - 12:26:09
پچھلی خبریں -

کراچی

کراچی میں ٹارگٹ کلرز نے17افراد کو موت کی نیند سلا دیا

کراچی(اُردو پوائنٹ اخبار تازہ ترین۔5جنوری۔2014ء) کراچی میں ٹارگٹ کلرزنے17افرادکوموت کی نیند سلادیا۔ تفصیلات کے مطابق گلشن اقبال کے علاقے بلاک7مسکن چورنگی کے قریب جمعے اورہفتے کی درمیانی شب موٹرسائیکلوں پرسوار دہشت گردوں نے آغاحیدرجوس اور باربی کیو ریسٹورینٹ پرفائرنگ کردی۔جس کے نتیجے میں قریب ہی کھڑی سوزوکی ہائی روف میں سواراورباہربیٹھے ہوئے7افرادشدیدزخمی ہوگئے جنھیں انتہائی تشویشناک حالت میں قریب ہی واقع نجی اسپتال لایا گیا جہاں 3 افراد عبدالواحد، حسین علی اورنادر علی زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے دم توڑ گئے۔

ایس ایچ او گلشن اقبال عرفان احمدنے بتایاکہ جاں بحق ہونے والا عبدالواحدآغاحیدرجوس کامالک تھاجبکہ دیگر 2 ملازمین تھے ، زخمیوں میں 4 افراد جواد حیدر، رئیس احمد ، تصور عباس اور غلام سخی شدید زخمی ہیں اورڈاکٹرز ان کی جان بچانے کی کوششوں میں مصروف ہیں۔پولیس کے مطابق مقتولین کا تعلق ہزارہ کمیونٹی سے تھاجو کہ منگھوپیر کے علاقے یعقوب شاہ بستی میں رہائش پذیر اور ان کا آبائی تعلق کوئٹہ ہزارہ سے تھا۔

علاقے سے ملنے والی اطلاعات کے مطابق 3 موٹر سائیکلوں پر 6 سے زائد دہشت گرد سوار تھے اور انھوں نے آزادانہ نہتے افرادپرفائرنگ کی اورفرار ہوگئے۔جوہرآبادکے علاقے راشدمنہا س روڈریاض آٹوز یو بی ایل اسپورٹس کمپلیکس کے قریب موٹر سائیکل سوار دہشت گردوں نے سڑک عبور کرنے والے 2 افراد پرفائرنگ کر دی جس کے نتیجے میں وہ موقع پر ہی جاں بحق ہوگئے،فائرنگ سے متعدد گاڑیاں آپس میں ٹکرا گئیں۔

جاں بحق ہونے والے دونوں افرادکی لاشیں گلشن اقبال میں واقع نجی اسپتال لایاگیاجہاں ان کی شناخت 30 سالہ ساجد معاویہ اور25 سالہ عابد معاویہ کے نام سے ہوئیں جو سگے بھائی اور گلشن اقبال میں قائم مدرسہ احسن العلوم میں زیر تعلیم اور دورہ حدیث عالم کورس کے آخری سال کے طالبعلم تھے اوراپنی رہائشی گاہ شفیق موڑ سے مدرسے پیدل ہی جا رہے تھے کہ ٹارگٹ کلنگ کا نشانہ بنا دیے گئے۔

دونوں طلباکی ہلاکت پرمشتعل افرادنے راشد منہاس روڈسہراب گوٹھ سے گلشن اقبال تک پتھراو کر کے متعدد گاڑیوں کے شیشے توڑ دیے اور ٹریفک معطل کر دیا جبکہ ٹائربھی نذر آتش کیے۔پولیس کا کہناہے کہ مقتولین شفیق موڑکے قریب مسکین آبادکے رہائشی اور ان کاآبائی تعلق تونسہ شریف ڈیرہ غازی خان سے تھاجبکہ مقتولین کے والدعبداﷲ ملک انور گوٹھ میں مسجد کے پیش امام ہیں،اہلسنت والجماعت کے ترجمان مولانا عمر معاویہ نے بتایا کہ مقتولین بھائی اہلسنت والجماعت کے کارکنان تھے اوران کی نمازجنازہ اہلسنت والجماعت کے رہنمااورنگزیب فاروقی نے پڑھائی اور اس موقع پر پولیس اور رینجرز کی بھاری نفری موقع پرتعنیات تھی۔

منگھو پیر نمبر4 ڈاکخانہ البدر موڑپرموٹر سائیکل سوارملزمان نے پیرآباد تھانے کی پولیس موبائل نمبر SP-6202 پر فائرنگ کردی جس سے2پولیس اہلکار45 سالہ ہیڈ کانسٹیبل لال حکیم عرف لالہ

مکمل خبر پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

05/01/2014 - 12:43:55 :وقت اشاعت

:متعلقہ عنوان