بند کریں
منگل ستمبر

تیر و ترکش

خامہ بدست کے قلم سے :

#جس سے پیار کرتا ہوں اس کے کتے سے پیار نہیں کرسکتا، جسٹس(ر) وجیہہ الدین
کیوں کہ آپ جج ہیں مجنوں نہیں!
#عمران خان نے جسٹس(ر) وجیہہ الدین کی پارٹی رکنیت معطل کر دی۔
کتوں سے پیار نہ کرنے کے جرم میں!
#کشکول ہماری مجبوری بن گیا ہے، صدر ممنون حسین
اب تو سنا ہے کشکول کی بجائے دیگ تک بات پہنچ چکی ہے۔
#ن لیگ فضل الرحمن کے کندھوں پر بندوق رکھ کر نہ چلائے، عمران خان
ن لیگ بھی کیا کرے کہ اُن کندھوں سے مضبوط کندھے دستیاب ہی نہیں …پاکستانی سیاست میں۔
#عمران خان خیرات بھی غنڈہ گردی سے مانگ رہے ہیں، ایم کیو ایم
جیسے کراچی میں زکوٰة، فطرانہ اور قربانی کی کھالیں مانگی جاتی ہیں؟
#الطاف حسین پارٹی چھوڑنے سے متعلق خود فیصلہ کریں کارکنان کو تکلیف نہ دیں، نثار کھوڑو
بھائی تو پہلے ہی بہت سی تکلیفوں میں مبتلا ہیں یہ تکلیف تو شاید وہ برداشت ہی نہ کر پائیں اس لیے کارکنوں کو ہی ’کچھ‘ کرنا پڑے گا۔
#اچانک ایسا کیا ہوا کہ ایف آئی اے اور نیب اتنی متحرک ہو گئی، سید قائم علی شاہ
اچانک نہیں یہ سب تو گزشتہ آٹھ برس سے ہو رہا تھا بس نیب اور ایف آئی اے کو فعال کرنے والے ہی مصروف تھے…’اور ،اور‘کاموں میں۔
#براوقت آیا تو رابطہ کمیٹی کے ارکان مجھے چھوڑ گئے، الطاف حسین
آپ نے اچھے وقت میں ایسے لوگ خود ہی چنے تھے ناں!
#پاکستان کے مستقبل کے لیے سویلین سیٹ اپ ضروری ہے، امریکا
اس طرح کا بیان آپ کی طرف سے اُس وقت آیا کرتاہے جب پاکستان کا سویلین سیٹ اپ آپ کے لیے غیر ضروری ہو جایا کرتا ہے۔
#پاکستان کی نظر یاتی سرحدوں کی حفاظت کی جدوجہد کر رہے ہیں ،ثروت اعجاز قادری
جو کام نہ آتا ہو اسے شروع ہی نہیں کرنا چاہیے۔
#ہم مل کر عمران کو سیاست سکھائیں گے، خواجہ سعد رفیق
اب اتنے بھی استاد بننے کی کوشش نہ کریں… خواجہ صاحب!
#حاکم وقت کی تنخواہ مزدور کے برابر ہونی چاہیے، ،جسٹس جواد ایس خواجہ
اور قا ضیٴ وقت کی…؟
#الطاف حسین سے علیحدگی کا تصور نہیں کرسکتے، طاہر کھوکھر
کیوں کہ اب ایسا ہونا حقیقت بنتا نظر آرہا ہے!
#ملکی قرضے47ارب ڈالر تک پہنچ گئے ۔
تاجر اور کاروباری حکمرانوں کی صلاحیت پر سوالیہ نشان۔
#متحدہ قائد فوج کا احترام کرتے ہیں، اسپیکر قومی اسمبلی
آپ کی گواہی بھی ریکارڈ ہو گئی۔
#پارلیمنٹ کا ماحول ہم نے مل کر ٹھنڈا کیا، سید خورشید شاہ
ماحول گرم کرنے والوں کا بھی کچھ کریں شاہ جی …ورنہ پوری پارلیمنٹ کے ٹھنڈا ہونے کا اندیشہ ہے۔
#مہنگائی کی شرح میں اضافہ ہوسکتا ہے، وزیرخزانہ
اس منہ سے کبھی خیر کی خبر بھی آئے گی کیا؟
#وزیر تعلیم سندھ کی بلاول بھٹو سے مکمل اختیارات تفویض کرنے کی درخواست
جو مکمل اختیارات سندھ کے وزیر تعلیم صاحب مانگ رہے ہیں وہ تو خود بلاول کے پاس بھی نہیں…ہیں جی!
#مدارس کا کریک ڈاؤن پنجاب کے حکمرانوں کی سیاست پر بدنما داغ ہے، مولانا فضل الرحمن
پنجاب کے حکمرانوں کو پرواہ ہی نہیں کیوں کہ وہ ”داغ تو اچھے ہوتے ہیں“پر یقین رکھتے ہیں۔
#پیپلز پارٹی کا بھی امتحان شروع ہونے والا ہے،شیخ رشید
اگرزرداری صاحب نے’ ممتحنوں‘سے بھی مفاہمت نہ کر لی … اُن کی شرائط پر
#الیکشن کمیشن نے مطمئن نہ کیا تو پھر سڑکوں پر آئیں گے، عمران خان
اب آپ کی حسِ اطمینان کی کارکردگی پہلے سے بہتر ہو جائے گی، جو سڑکوں کی بجائے آپ کو گھر لے جائے گی
© جملہ حقوق بحق ادارہ اُردو پوائنٹ محفوظ ہیں۔
© www.UrduPoint.com
تاریخ اشاعت: 2015-08-12

کالم نگار     :     خامہ بدست کے قلم سے

خامہ بدست کے قلم سے کے مزید کالم پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے-