خیبرپختونخوا اور بلوچستان میں تین روزہ انسداد پولیو مہم کا آغاز ہو گیا‘سیکیورٹی ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
پیر مئی

مزید اہم خبریں

وقت اشاعت: 16/05/2016 - 13:16:36 وقت اشاعت: 16/05/2016 - 13:04:22 وقت اشاعت: 16/05/2016 - 12:59:52 وقت اشاعت: 16/05/2016 - 12:59:52 وقت اشاعت: 16/05/2016 - 12:59:52 وقت اشاعت: 16/05/2016 - 12:59:09 وقت اشاعت: 16/05/2016 - 12:59:06 وقت اشاعت: 16/05/2016 - 12:59:06 وقت اشاعت: 16/05/2016 - 12:58:08 وقت اشاعت: 16/05/2016 - 12:58:08 وقت اشاعت: 16/05/2016 - 12:58:08
پچھلی خبریں - مزید خبریں

پشاور

خیبرپختونخوا اور بلوچستان میں تین روزہ انسداد پولیو مہم کا آغاز ہو گیا‘سیکیورٹی کے سخت انتظامات

پشاور / کوئٹہ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔16 مئی۔2016ء) خیبرپختونخوا‘ فاٹا اور بلوچستان میں تین روزہ انسداد پولیو مہم شروع ہو گئی۔ خیبرپختونخوا میں پانچ سال سے کم عمر کے 56 لاکھ بچوں جبکہ قبائلی علاقوں میں 9 لاکھ 65 ہزار 633 بچوں کو پولیو سے بچاو کے قطرے پلائے جائیں گے۔تفصیلات کے مطابق خیبرپختونخوا میں پانچ سال سے کم عمر کے 56 لاکھ بچوں کو پولیو سے بچاو کے قطرے پلانے کے لئے 17 ہزار ٹیمیں تشکیل دی گئی ہیں۔

14 ہزار پولیو ورکرز گھر گھر جا کر جبکہ 3 ہزار پولیو ٹیموں کے 9ہزار ورکرز ٹرانسپورٹ اڈوں، تجارتی مراکز اور اہم شاہراہوں پر بچوں کو پولیو سے بچاو کے قطرے پلائیں گے۔ اس مقصد کے لئے 3ہزار لیڈی ہیلتھ ورکررز کی تعیناتی کی گئی ہے۔مہم کے لئے سکیورٹی انتہائی سخت کر دی گئی ہے۔ پشاور سمیت تمام بڑے اور حساس اضلاع میں موٹر سائیکل کی ڈبل سواری پر پابندی عائد کر دی گئی ہے۔

قبائلی علاقوں میں 9 لاکھ 65 ہزار 633 بچوں کو پولیو سے بچاو کے قطرے پلائے جائیں گے جس کے لئے 3ہزار 78 ٹیمیں تشکیل دی

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

16/05/2016 - 12:59:09 :وقت اشاعت