پشاور ‘ سرکاری ملازمین کی بس میں دھماکہ ‘ 16 افراد جاں بحق ‘ 30 سے زائد زخمی ‘ ہلاکتوں ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
بدھ مارچ

مزید اہم خبریں

وقت اشاعت: 16/03/2016 - 13:30:37 وقت اشاعت: 16/03/2016 - 13:29:49 وقت اشاعت: 16/03/2016 - 13:29:49 وقت اشاعت: 16/03/2016 - 13:28:59 وقت اشاعت: 16/03/2016 - 13:28:59 وقت اشاعت: 16/03/2016 - 13:28:59 وقت اشاعت: 16/03/2016 - 13:25:10 وقت اشاعت: 16/03/2016 - 13:25:10 وقت اشاعت: 16/03/2016 - 13:25:10 وقت اشاعت: 16/03/2016 - 13:24:34 وقت اشاعت: 16/03/2016 - 13:24:34
پچھلی خبریں - مزید خبریں

پشاور

پشاور ‘ سرکاری ملازمین کی بس میں دھماکہ ‘ 16 افراد جاں بحق ‘ 30 سے زائد زخمی ‘ ہلاکتوں میں اضافے کا خدشہ

دھماکے میں جاں بحق ہونے والے متعدد افراد کو ریسکیو حکام نے بس کاٹ کر باہرنکا لا

پشاور/اسلام آباد (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔16 مارچ۔2016ء)صوبائی دارالحکومت پشاور میں سنہری مسجد روڈ پر سرکاری ملازمین کی بس میں دھماکے کے نتیجے میں 16 افراد جاں بحق اور 30 سے زائد زخمی ہو گئے ‘ دھماکے میں جاں بحق ہونے والے متعدد افراد کو ریسکیو حکام نے بس کاٹ کر باہرنکا لا ‘زخمیوں میں بعض کی حالت نازک ہے جس کے باعث ہلاکتوں میں اضافے کا خدشہ ہے ‘ دھماکے کی آواز دور دور تک سنی گئی ‘ قریبی عمارتوں کے شیشے ٹوٹ گئے جبکہ صدر مملکت ممنون حسین ‘وزیر اعظم نواز شریف نے دھماکے کی مذمت کرتے ہوئے کہاہے کہ ‘بزدلانہ حملے دہشت گردی کے خلاف قوم کے عزم کو متزلزل نہیں کرسکتے ‘حملے میں ملوث افراد کو کیفر کردار تک پہنچایا جائیگاجبکہ وفاقی وزیر داخلہ چوہدری نثار علی خان نے دھماکے کی مذمت کرتے ہوئے متعلقہ حکام سے رپورٹ طلب کرلی ہے ۔

بدھ کو ایک بس پاک سیکرٹریٹ کے ملازمین کو مختلف دیہاتوں سے ان کے دفاتر کیلئے لا رہی تھی اور اور جیسے ہی صبح ساڑھے آٹھ بجے کے قریب سرکاری ملازمین کی بس سنہری مسجد روڈ پر پہنچی تو زوردار دھماکہ ہو گیا جس کے نتیجے میں 16 افراد جاں بحق اور 30 سے زائد زخمی ہوگئے ‘عینی شاہدین کے مطابق دھماکے کے وقت بس میں 30 سے زائد افراد سوار تھے، دھماکا اتنا شدید نوعیت کا تھا کہ اس کی آواز دوردور تک سنی گئی ‘قریبی عمارتوں کے شیشے بھی ٹوٹ گئے۔

ریسکیو حکام نے بتایا کہ 27 زخمیوں کو لیڈی ریڈنگ ہسپتال منتقل کیا گیا جہاں انھیں طبی امداد دی جا رہی ہے ‘ متعدد افراد کی حالت تشویشناک ہونے کے باعث ہلاکتوں میں اضافے کا خدشہ ہے ‘ ہسپتال میں ایمرجنسی نافذ کر دی گئی اور لوگوں سے زخمیوں کیلئے خون کے عطیات کی اپیل کی گئی ۔ذرائع کے مطابق بعض زخمیوں کو کنٹونمنٹ بورڈ ہسپتال بھی منتقل کیا گیا ہے ‘ایس ایس پی آپریشنز عباس مجید مروت نے 16افراد جاں جاں بحق ہونے کی تصدیق کرتے ہوئے بتایا کہ دھماکہ آئی ای ڈی ڈیوائس کے ذریعے کیا گیا جو بس میں ٹول بکس کے قریب رکھی گئی تھی جس کے ساتھ ٹائم ڈیوائس بھی نصب تھی ‘دھماکے میں 8 کلو گرام بارودی مودا استعمال کیا گیاتاہم بم ڈسپوزل یونٹ کے مطابق بس میں 8 کلو گرام بارودی مواد ٹائم ڈیوائس کے ساتھ سی این جی کے چار سلنڈرز کے قریب نصب کیا گیا تھاایس پی کینٹ کاشف ذو الفقار کے مطابق دھماکے میں جاں بحق ہونے والے افراد میں سے زیادہ تر کا تعلق مردان سے ہے ‘ دھماکے میں جاں بحق ہونے والے متعدد افراد کو ریسکیو حکام نے بس کاٹ کر باہرنکالا تاہم عینی شاہد ین کے مطابق دھماکے کا نشانہ بننے والی بس میں سول سیکرٹریٹ کے علاوہ دیگر سرکاری دفاتر میں کام کرنے والے ملازمین سوار تھے جو مردان اور دیگر علاقوں سے پشاور آ رہے تھے ۔

ادھر ڈپٹی کمشنر ریاض محسود نے بتایا کہ دھماکے کے متاثرین میں بیشتر سرکاری اہلکار ہیں اور جنہیں ریڈی ریڈنگ ہسپتال لایا گیا ہے۔لیڈی ریڈنگ اسپتال کے میڈیکل سپرنٹنڈنٹ نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے بتایا کہ زخمیوں میں ایک بچہ اور 3 خواتین زخمی شامل ہیں ‘ جاں بحق ہونے والوں میں تمام افراد مرد تھے۔دوسری جانب دھماکے کے بعد سیکورٹی

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

16/03/2016 - 13:28:59 :وقت اشاعت

:متعلقہ عنوان