پنجاب اسمبلی نے حقوق نسواں بل پاس کر کے 1973کے آئین کی توہین کی ہے،مولاناگل نصیب
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
بدھ مارچ

مزید قومی خبریں

وقت اشاعت: 02/03/2016 - 20:28:48 وقت اشاعت: 02/03/2016 - 20:28:48 وقت اشاعت: 02/03/2016 - 20:19:09 وقت اشاعت: 02/03/2016 - 20:16:14 وقت اشاعت: 02/03/2016 - 20:16:14 وقت اشاعت: 02/03/2016 - 20:16:14 وقت اشاعت: 02/03/2016 - 20:15:13 وقت اشاعت: 02/03/2016 - 20:15:13 وقت اشاعت: 02/03/2016 - 20:15:13 وقت اشاعت: 02/03/2016 - 20:13:29 وقت اشاعت: 02/03/2016 - 20:07:32
پچھلی خبریں - مزید خبریں

پشاور

پنجاب اسمبلی نے حقوق نسواں بل پاس کر کے 1973کے آئین کی توہین کی ہے،مولاناگل نصیب

ملک کو سوچھے سمجھے منصوبے کے تحت سیکولر ازم کی طرف لے جایا جارہا ہے،حکومت نے ممتاز قادری کو پھانسی دیکر کروڑوں مسلمانوں کے جذبات کو مجروح کیا،امیر جمعیت علماء اسلام خیبرپختونخوا گل نصیب خان کی پریس کانفرنس

پشاور(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔02 مارچ۔2016ء)جمعیت علماء اسلام خیبر پختونخوا کے امیر مولا نا گل نصیب خان نے کہا ہے کہ پنجاب اسمبلی نے حقوق نسواں بل پاس کر کے 1973کے آئین کی توہین کی ہے ، ملک کو ایک سوچھے سمجھے منصوبے کے تحت سیکولر ازم کی طرف لے جایا جارہا ہے،حکومت نے ممتاز قادری کو پھانسی دیکر کروڑوں مسلمانوں کے جذبات کو مجروح کیا۔جے یو آئی سیکرٹریٹ میں صوبائی مجلس عاملہ اجلاس کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے مولانا گل نصیب کاکہنا تھاکہ ملک کو ایک سوچھے سمجھے منصوبے کے تحت سیکولر ازم کی طرف لے جایا جارہا ہے ، جمعیت علماء اسلام نے اسمبلی اور سینٹ دونوں سے وومین پروٹیکشن بل کو پسپاکر کے لوگوں کے دلوں کی ترجمانی کی ہیں ، پنجاب

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

02/03/2016 - 20:16:14 :وقت اشاعت