پشاورمیں ٹریفک وارڈن سروس فنڈز کی کمی کا شکار
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
اتوار فروری

مزید قومی خبریں

وقت اشاعت: 28/02/2016 - 16:41:36 وقت اشاعت: 28/02/2016 - 16:40:01 وقت اشاعت: 28/02/2016 - 16:40:01 وقت اشاعت: 28/02/2016 - 16:40:01 وقت اشاعت: 28/02/2016 - 16:38:54 وقت اشاعت: 28/02/2016 - 16:38:54 وقت اشاعت: 28/02/2016 - 16:38:53 وقت اشاعت: 28/02/2016 - 16:37:47 وقت اشاعت: 28/02/2016 - 16:37:47 وقت اشاعت: 28/02/2016 - 16:37:47 وقت اشاعت: 28/02/2016 - 16:33:17
پچھلی خبریں - مزید خبریں

پشاور

پشاورمیں ٹریفک وارڈن سروس فنڈز کی کمی کا شکار

8 ماہ سے زیادہ عرصہ گزرنے کے باوجود مطلوبہ نفری پوری ہوئی اور نہ گاڑیاں فراہم کی گئی

پشاور(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔28 فروری۔2016ء)پشاورمیں ٹریفک وارڈن سروس فنڈز کی کمی کا شکارہوگیا،8 ماہ سے زیادہ عرصہ گزرنے کے باوجود مطلوبہ نفری پوری ہوئی اور نہ گاڑیاں فراہم کی گئیں۔ ذرائع کے مطابق پشاورمیں 8 ماہ قبل ٹریفک وارڈن سروس شروع کی گئی۔ تاہم کئی ماہ گزر جانے کے باوجود مطلوبہ نفری پوری ہوئی اور نہ گاڑیاں ملیں۔ عملہ کی تعداد کم ہونے کے باعث چارسدہ روڈ، دلہ زاک روڈ اور اندرون شہر وارڈنز تعینات نہیں

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

28/02/2016 - 16:38:54 :وقت اشاعت

:متعلقہ عنوان