سرکاری اداروں کی نجکاری سے مسائل حل نہیں بلکہ جنم لیتے ہیں،رحم بادشاہ شیرپاؤ
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
بدھ فروری

مزید قومی خبریں

وقت اشاعت: 10/02/2016 - 18:57:42 وقت اشاعت: 10/02/2016 - 18:57:42 وقت اشاعت: 10/02/2016 - 18:56:48 وقت اشاعت: 10/02/2016 - 18:56:30 وقت اشاعت: 10/02/2016 - 18:56:30 وقت اشاعت: 10/02/2016 - 18:56:30 وقت اشاعت: 10/02/2016 - 18:53:30 وقت اشاعت: 10/02/2016 - 18:53:30 وقت اشاعت: 10/02/2016 - 18:53:30 وقت اشاعت: 10/02/2016 - 18:39:00 وقت اشاعت: 10/02/2016 - 18:14:49
پچھلی خبریں - مزید خبریں

پشاور

سرکاری اداروں کی نجکاری سے مسائل حل نہیں بلکہ جنم لیتے ہیں،رحم بادشاہ شیرپاؤ

پشاور(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔10 فروری۔2016ء) پاکستان پیپلزپارٹی کے صوبائی رہنما رحم بادشاہ شیرپاؤ نے پشاور کے ہسپتالوں اور پی آئی اے میں ظالمانہ لازمی سروس ایکٹ کو شدید تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہاہے کہ ہسپتالوں میں اس قانون کے نفاذ سے ایک طرف اگر ڈاکٹرز اور دیگرعملہ متاثرہورہاہے تو دوسری جانب ان کے ہڑتالوں سے مریض بھی مشکلات کا سامناکررہے ہیں۔

انہوں نے کہاہے کہ عمران خان ایک جانب پی آئی اے میں لازمی سروس ایکٹ کی مخالفت کررہے ہیں اور دوسری جانب خیبرپختونخوا میں اس کی حمایت کررہے ہیں جو کہ سراسرتضاد ہے اور ملازمین کے ساتھ ناانصافی ہے۔ انہوں نے کہاہے کہ صوبائی حکومت سنجیدگی سے ڈاکٹروں اور دیگر عملے کی مشکلات کونیک نیتی سے دورکر یں تاکہ ہسپتالوں میں مریضوں کا علاج جاری ہوسکے۔

انہوں پی آئی اے کی نجکاری کو بھی حکومت کی نااہلی قراردی اور کہاکہ سرکاری اداروں کی نجکاری سے مسائل حل نہیں بلکہ جنم لیتے ہیں حکومت کو سرکاری اداروں کی نجکاری کی بجائے اس کی اصلاح کیلئے اقداما ت اٹھانے چاہئے۔ رحم بادشاہ شیرپاؤ نے کہا کہ یہ محنت کش طبقے کا پاکستان ہے اور ہم پی آئی اے کے ملازمین اور ڈاکٹروں کے ساتھ ہیں اور ان کی حقوق کیلئے ہرفورم پر بھرپورآواز اٹھائیں گے

10/02/2016 - 18:56:30 :وقت اشاعت

:متعلقہ عنوان