خیبرپختونخوا کے ہسپتالوں میں لازمی سروسز ایکٹ کے نفاذ کیخلاف ڈاکٹرز اورملازمین ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
بدھ فروری

مزید اہم خبریں

وقت اشاعت: 10/02/2016 - 16:48:30 وقت اشاعت: 10/02/2016 - 16:48:30 وقت اشاعت: 10/02/2016 - 16:47:20 وقت اشاعت: 10/02/2016 - 16:47:20 وقت اشاعت: 10/02/2016 - 16:47:20 وقت اشاعت: 10/02/2016 - 16:46:31 وقت اشاعت: 10/02/2016 - 16:30:41 وقت اشاعت: 10/02/2016 - 16:30:40 وقت اشاعت: 10/02/2016 - 16:30:39 وقت اشاعت: 10/02/2016 - 16:28:41 وقت اشاعت: 10/02/2016 - 16:28:41
پچھلی خبریں - مزید خبریں

پشاور

خیبرپختونخوا کے ہسپتالوں میں لازمی سروسز ایکٹ کے نفاذ کیخلاف ڈاکٹرز اورملازمین کااحتجاج

پشاور(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔10 فروری۔2016ء)خیبرپختونخوا کے ہسپتالوں میں لازمی سروسز ایکٹ کے نفاذ کے خلاف ڈاکٹرز اورملازمین کااحتجاج اوربائیکاٹ جاری ہے، پشاور کے لیڈی ریڈنگ ہسپتال سمیت صوبے کے دیگرہسپتالوں میں اوپی ڈیز بند بندرہی جس سے مریضوں کوپریشانی کاسامناکرناپڑا۔ مریضوں کے تیمارداروں نے روڈ بلاک کرکے ڈاکٹروں کی ہڑتال کے خلاف شدید احتجاج بھی کیا۔

خیبرپختونخوا کے اسپتالوں میں لازمی سروسز ایکٹ کے تحت ڈاکٹرز اورملازمین کی برطرفی کے خلاف ینگ ڈاکٹرز کا احتجاج بدھ کے روز بھی جاری رہاپشاور اور صوبے کے مختلف ہسپتالوں میں اوپی ڈیز کوبند رکھا ۔لیڈی ریڈنگ اسپتال میں چیف نرس کو کام سے روکنے کیلئے کمرے میں بند کردیا گیا۔ ڈاکٹروں اور اسٹاف نے کام بند کرکے احتجاجی جلسہ کیا اور لازمی سروس ایکٹ کوفوری ختم کرنے

مکمل خبر پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

10/02/2016 - 16:46:31 :وقت اشاعت

:متعلقہ عنوان