صوبہ خیبر پختونخوا میں دہشت گردی اغواء برائے تاوان اور بھتہ وصولی سمیت دیگر جرائم ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
منگل فروری

مزید قومی خبریں

وقت اشاعت: 02/02/2016 - 20:20:20 وقت اشاعت: 02/02/2016 - 20:18:08 وقت اشاعت: 02/02/2016 - 20:15:14 وقت اشاعت: 02/02/2016 - 20:15:14 وقت اشاعت: 02/02/2016 - 20:15:14 وقت اشاعت: 02/02/2016 - 20:13:26 وقت اشاعت: 02/02/2016 - 20:13:26 وقت اشاعت: 02/02/2016 - 18:49:03 وقت اشاعت: 02/02/2016 - 18:49:03 وقت اشاعت: 02/02/2016 - 18:06:11 وقت اشاعت: 02/02/2016 - 18:06:11
پچھلی خبریں - مزید خبریں

پشاور

صوبہ خیبر پختونخوا میں دہشت گردی اغواء برائے تاوان اور بھتہ وصولی سمیت دیگر جرائم کی وجہ سے بزنس کمیونٹی عدم تحفظ کا شکار ہے،ذوالفقار علی خان

پشاور (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔02 فروری۔2016ء) ایس ایس پی آپریشن عباس مجید خان مروت نے خیبر پختونخوا چیمبر کے صدر ذوالفقار علی خان کی سفارش پر صنعتکاروں تاجروں اور دکانداروں کودرپیش مسائل کے فوری حل اور امن و امان کی صورتحال میں بہتری کے لئے خیبر پختونخوا چیمبر کے نامزد ممبران اور محکمہ پولیس کے اعلیٰ افسران سمیت الائیڈ سیکورٹی فورسز کے افسران پر مشتمل لیزان کمیٹی کے قیام کا اعلان کیا ہے اور خیبر پختونخوا چیمبر کو یقین دلایا ہے کہ محکمہ پولیس کاروباری طبقے کی جان و مال کے تحفظ اور شہر میں دہشت گردی کی وارداتوں پر قابو پانے کیلئے ہر ممکن موثر اقدامات اٹھائے گی ۔

ڈسپیوٹ ریزولیشن کونسل فقیر آباد میں چیمبر کے نامزد ممبران کو شامل کیا جائے گا ۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے خیبر پختونخوا چیمبر کے صدر ذوالفقار علی خان کی زیر صدارت چیمبر ہاؤس میں منعقدہ اعلیٰ سطحی اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ اس موقع پر خیبر پختونخوا چیمبر کے سینئر نائب صدر عماد رشید نائب صدر شجاع محمد خیبر پختونخوا چیمبر کے سابق صدور صوفی بشیر احمد درانی شرافت علی مبارک زاہداللہ شنواری ایگزیکٹو ممبران حاجی محمد افضل محمداشتیاق راشد اقبال اور حاجی محمد اسرار ضیاء الحق سرحدی فیض محمد فیضی صادق امین پرویز خٹک عابد اللہ صدر گل ملک افتخار احمد اعوان فیض رسول عبدالقادر صراف محمد عمران احسان اللہ مہمند اور ایس پی امتیاز سمیت صنعت و تجارت سے وابستہ ممبران اور پولیس افسران کثیر تعداد میں موجود تھے ۔

خیبر پختونخوا چیمبر کے صدر ذوالفقار علی خان نے اپنے خطاب میں دہشت گردی کے خلاف جنگ میں محکمہ پولیس کی قربانیوں پر انہیں خراج تحسین پیش کیا اور کہا کہ صوبہ خیبر پختونخوا میں دہشت گردی اغواء برائے تاوان اور بھتہ وصولی سمیت دیگر جرائم کی وجہ سے بزنس کمیونٹی عدم تحفظ کا شکار ہے۔ انہوں نے نجی تعلیمی اداروں کی سیکورٹی سخت اور موثر بنانے کی ضرورت پر زور دیا اور کہا کہ بچوں کے مستقبل اور ان کی جانوں کے تحفظ کیلئے محکمہ پولیس اور نجی تعلیمی اداروں کو مل کر موثر سیکورٹی یقینی بنانی چاہئے۔

انہوں نے بزنس کمیونٹی کو درپیش روزمرہ کے مسائل کے حل کیلئے چیمبر اور محکمہ پولیس کے مابین لیزان کمیٹی تشکیل دینے کا مطالبہ کیا اور کہا کہ جب تک صوبے میں امن قائم نہیں ہوگا کوئی بھی سرمایہ کاراس صوبے میں سرمایہ

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

02/02/2016 - 20:13:26 :وقت اشاعت

:متعلقہ عنوان