جماعت اسلامی پاکستان کے سابق امیراور انقلابی سوچ رکھنے والے سیاستدان قاضی حسین ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
بدھ جنوری

مزید اہم خبریں

وقت اشاعت: 06/01/2016 - 19:33:34 وقت اشاعت: 06/01/2016 - 19:33:34 وقت اشاعت: 06/01/2016 - 19:24:10 وقت اشاعت: 06/01/2016 - 19:24:10 وقت اشاعت: 06/01/2016 - 19:23:29 وقت اشاعت: 06/01/2016 - 19:19:38 وقت اشاعت: 06/01/2016 - 19:12:28 وقت اشاعت: 06/01/2016 - 19:10:15 وقت اشاعت: 06/01/2016 - 19:10:15 وقت اشاعت: 06/01/2016 - 19:08:57 وقت اشاعت: 06/01/2016 - 19:08:57
پچھلی خبریں - مزید خبریں

پشاور

جماعت اسلامی پاکستان کے سابق امیراور انقلابی سوچ رکھنے والے سیاستدان قاضی حسین احمد کی تیسری برسی منائی گئی

پشاور(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔06 جنوری۔2016ء) جماعت اسلامی پاکستان کے سابق امیراور انقلابی سوچ رکھنے والے سیاستدان قاضی حسین احمد کی تیسری برسی بدھ کو منائی گئی۔اس موقع پر مختلف شہروں میں جماعت اسلامی اور دیگر جماعتوں کی طرف سے ان کی خدمات کے اعتراف کی تقریبات کا انعقاد کیا گیا جبکہ اخبارات نے خصوصی ایڈیشن شائع کئے۔قاضی حسین احمد کا انتقال 2013 میں ہوا تھا۔

وہ1938 میں ضلع نوشہرہ کے گاؤں زیارت کاکا صاحب میں پیدا ہوئے، ان کے والد مولانا قاضی محمد عبدالرب ایک ممتاز عالم دین تھے، جو اپنے علمی رسوخ اور سیاسی بصیرت کے باعث جمعیت علمائے ہند صوبہ سرحد (موجودہ خیبر پختونخوا) کے صدر چْنے گئے تھے۔قاضی حسین احمد 10 بہن بھائیوں میں سب سے چھوٹے تھے، ان کے بڑے بھائی ڈاکٹر عتیق الرحمٰن اور مرحوم قاضی عطاء الرحمٰن اسلامی جمعیت طلبہ میں شامل تھے۔

قاضی حسین احمد بھی اپنے بھائیوں کے ہمراہ اسلامی جمعیت طلبہ کی سرگرمیوں میں شریک ہونے لگے، لٹریچر کا مطالعہ کیا اور یوں جمعیت سے وابستہ ہوئے۔انہوں نے ابتدائی تعلیم گھر پر اپنے والد مولانا قاضی محمد عبدالرب سے حاصل کی، پھر پشاور کے اسلامیہ کالج سے گریجویشن کی اور پشاور یونیورسٹی سے جغرافیہ میں ماسٹرز کی ڈگری حاصل کی، بعد از تعلیم وہ سیدو شریف میں جہانزیب کالج میں بحیثیت لیکچرار تعینات ہوئے اور وہاں 3 برس تک پڑھاتے رہے۔

جماعت اسلامی کی سرگرمیوں اور اپنے فطری رحجان کے باعث وہ ملازمت جاری نہ رکھ سکے اور پشاور میں اپنا کاروبار شروع کر دیا، جلد ہی وہ سرحد چیمبر آف کامرس اینڈ انڈسٹریز کے نائب صدر منتخب ہوئے۔دوران تعلیم اسلامی جمعیت طلبہ پاکستان میں شامل رہنے کے بعد قاضی حسین 1970 میں جماعت اسلامی کے باقاعدہ رکن بنے۔جماعت اسلامی پشاور (شہر) کے امیر رہنے کے بعد قاضی حسین احمد کو صوبہ سرحد کی امارت کی ذمہ داری سونپی گئی۔

وہ 1978 میں جماعت اسلامی پاکستان کے سیکریٹری جنرل بنے اور 1987 میں جماعت اسلامی پاکستان کے امیر منتخب

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

06/01/2016 - 19:19:38 :وقت اشاعت