محکمہ ثقافت خیبر پختونخوا نے صوبے میں ثقافتی سرگرمیوں کے فروغ کے نام پرڈھائی ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
ہفتہ جنوری

مزید قومی خبریں

وقت اشاعت: 02/01/2016 - 20:31:28 وقت اشاعت: 02/01/2016 - 20:31:28 وقت اشاعت: 02/01/2016 - 20:23:22 وقت اشاعت: 02/01/2016 - 20:20:21 وقت اشاعت: 02/01/2016 - 20:19:01 وقت اشاعت: 02/01/2016 - 20:08:24 وقت اشاعت: 02/01/2016 - 20:08:24 وقت اشاعت: 02/01/2016 - 20:08:24 وقت اشاعت: 02/01/2016 - 20:06:57 وقت اشاعت: 02/01/2016 - 20:06:57 وقت اشاعت: 02/01/2016 - 20:05:29
پچھلی خبریں - مزید خبریں

پشاور

محکمہ ثقافت خیبر پختونخوا نے صوبے میں ثقافتی سرگرمیوں کے فروغ کے نام پرڈھائی سال میں ساڑھے 4 چار کروڑ روپے سے زائد اڑا لیے

پشا ور (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔02 جنوری۔2016ء)سرکاری اخراجات کم کرنے اور کرپشن پر قابو پانے کے تمام تر دعوؤں کے باجود محکمہ ثقافت خیبر پختونخوا نے صوبے میں ثقافتی سرگرمیوں کے فروغ کے نام پر صوبے میں سرکاری و غیر سرکاری ثقافتی تقاریب کے انعقاد پر ڈھائی سال میں ساڑھے 4 چار کروڑ روپے سے زائد اڑا لیے جن میں سرکاری تقاریب پر لاکھوں خرچ کرنے کے علاوہ غیر سرکاری تنظیموں اور انفرادی افراد کو بھی لاکھوں روپے فراہم کئے گئے جبکہ سرکاری فنڈز کے غیر ضروری مزید استعمال کے لیے بھی منصوبہ تیار کرلیا گیااور صوبے میں ثقافتی سرگرمیوں کے فروغ کے نام پر منظور نظر افراد کو نوازنے کے لئے کروڑوں روپے کے اخراجات سے مزید تقاریب منعقد کرانے کا فیصلہ کیا ہے جس میں صوبے کے 75 تحصیلوں میں کلچر شو کا انعقاد ہوگا ۔

صوبے میں دہشت گردی کی وجہ سے متاثرہ گلوکاروں،فنکاروں،اور ثقافت سے وابسطہ افراد کی مالی امداد کے بجائے من پسند افراد کو قومی خزانے سے نوازا گیا ہیں ڈائریکٹریٹ آف کلچر کے ریکارڈ کے مطابق ڈائریکٹریٹ کلچر نے ثقافتی سرگرمیوں کے فروغ کے نام پر سرکاری خزانے سے جو فنڈز خرچ کئے ہیں ان میں نشترہال پشاور میں خوشحال خان خٹک سٹیج ڈرامہ کے انعقاد پر 27 لاکھ 94 ہزار 786 روپے  پاکستان تحریک انصاف کے خاتون رکن صوبائی اسمبلی نے انصاف ایوارڈ شو کے لئے نو لاکھ پچیس ہزار820 روپے،ملک سعد ٹرسٹ ایک لاکھ اٹھاسی ہزار روپے،اسلام آباد میں پختون کلچر نائٹ پر ایک لاکھ 12 ہزار 8 سو روپے  پاک افغان جرنلسٹس کی تقریب اور دلیپ کمار شو کے انعقاد پر ایک لاکھ 20ہزار 508 روپے  پہلے انٹرنیشنل سپورٹس جرنلسٹس کانفرنس کے انعقاد پر 2 لاکھ 38 ہزار 760 روپے  جشن عید میلاد النبی پر 2 لاکھ 57 ہزار 8 سو  حنا شاہد کی طرف سے کلچر شو پر 3 لاکھ 56 ہزار 456 روپے  برین نامی تنظیم صوابی کو روایتی کھیلوں کیلئے 2 لاکھ روپے فراہم کئے ۔

بشیر احمدبلور کے حوالے سے منعقدہ تقریب پر 3 لاکھ 60 ہزار روپے  کشمیر یکجہتی پروگرام پر ایک لاکھ 60 ہزار 740 روپے خرچ کئے گئے ۔ سینٹ میری سکول کو 50 ہزار روپے دیئے گئے ۔ نشترہال میں اجوکا تھیٹر کے نام سے ڈرامے کے انعقاد پر 5 لاکھ 51 ہزار خرچ کئے گئے ۔ پی این سی اے اسلام آباد میں پشتو ثقافتی شو پر 10 لاکھ روپے خرچ کئے گئے ۔ اسلام آباد میں سپرنگ فیسٹیول نام سے تقریب میں شرکت پر 8 لاکھ 50 ہزار روپے خوشحال ادبی جرگہ کو 94 ہزار روپے فراہم کئے گئے سید عدنان شاہ نامی شخص کو کلچر شو کے انعقاد کے لئے 2 لاکھ 35 ہزار روپے دیئے گئے ۔

رحمان ادبی جرگہ کو 50ہزار روپے دیئے گئے ۔ ظفر علی خان نامی شخص کو ایڈورڈ کالج میں ثقافتی شو کے نام پر 47 ہزار روپے دیئے گئے ۔ ایبٹ آباد میں خواتین کے روایتی کھیلوں کیلئے کفایت اللہ کو ساڑھے تین لاکھ روپے دیئے گئے ۔ وویمن رائٹرز فورم کو 50 ہزار روپے دیئے گئے ۔ جمیل نامی شخص کو پیوٹا کی طرف سے ڈرامے کے انعقاد کے لئے 2 لاکھ 44 ہزار روپے دیئے گئے ۔

اشتیاق ندیم کو ایسٹر پروگرام کیلئے 94 ہزار روپے دیئے گئے ۔23 مارچ کی تقااریب پر ایک لاکھ 97 ہزار روپے خرچ کئے گئے ۔ہمایون فیاض نامی شخص کو اسلام آباد میں ایکسپوریکنزیشن کے لئے 4 لاکھ 5ہزار روپے دیئے گئے ۔ سینٹ میریز ہائی سکول کو پرائمری ڈے کے انعقاد کیلئے 47 ہزار روپے دیئے گئے ۔ فرنٹیئر کالج کی مس نجمہ ناز کو 20 ہزار روپے دیئے گئے ۔ اسلام آباد میں لوک ورثہ کی تقریب میں شرکت پر 13 لاکھ 46 ہزار روپے خرچ کئے گئے اباسین آرٹس کونسل کو 5 لاکھ روپے دیئے گئے گلوکار شاہ ولی کے ساتھ شام منانے پر ایک لاکھ 8 ہزار روپے خرچ کئے گئے مختیار کانسی کو کلچر پالیسی لکھنے کے لئے 50ہزار روپے ادا کئے گئے ۔

آئی ایل ایم کے پرنسپل کو کلچر شو کے انعقاد کے لئے ایک لاکھ روپے دیئے گئے ۔ چیئرمین حیان ڈویلپمنٹ آرگنائزیشن کو کلچر شو کے انعقاد کے لئے ڈیڑھ لاکھ روپے دیئے ۔ شاک ذیشان خٹک کو کلچر شو کے انعقاد کیلئے 47 ہزار روپے دیئے گئے ۔ ایلومینائی ٹرسٹ کے چیئرمین کو سٹیج شو کے لئے 92 ہزار روپے دیئے گئے ۔ سوات ثمر فیسٹیول کے انعقاد پر 14 لاکھ 99 ہزار 360 روپے خرچ کئے گئے پرنسپل ایڈورڈز کالج کو کلچر شو کے لئے 50 ہزار روپے فراہم کئے گئے ۔

شاہ نگلہ یوتھ فرنٹ کو شاہ نگلہ فیسٹیول کے نام پر ساڑھے پانچ لاکھ روپے دیئے گئے ۔ تحریک نصاف کے کلچر ونگ کے صدر کو عید گالا کے نام پر 8 لاکھ 40 ہزار روپے دیئے گئے جبکہ ایک غریب خاتون سنگر مس شازیہ کو صرف 5 ہزار روپے کی امداد دی گئی ۔ یوم آزادی کی تقاریب پر 5 لاکھ روپے رائٹ ٹو انفارمیشن کی تربیتی پروگرام پر ایک لاکھ 13 ہزار روپے خرچ کئے گئے ڈیفنس ڈے کی تقریب پر 71 ہزار روپے خرچ کئے گئے ۔

خیبر لیٹرسی ڈی بیٹنگ سوسائٹی کو ایک لاکھ 88 ہزار روپے دیئے گئے ۔ اسلام

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

02/01/2016 - 20:08:24 :وقت اشاعت