زکریایونیورسٹی میں ’’ کپاس کی بڑھوتری اور پیداوار میں پوٹاش کھادوں کی افادیت ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
جمعرات دسمبر

مزید قومی خبریں

وقت اشاعت: 01/12/2016 - 23:29:46 وقت اشاعت: 01/12/2016 - 23:29:42 وقت اشاعت: 01/12/2016 - 23:29:41 وقت اشاعت: 01/12/2016 - 23:29:39 وقت اشاعت: 01/12/2016 - 23:29:35 وقت اشاعت: 01/12/2016 - 23:28:25 وقت اشاعت: 01/12/2016 - 23:28:25 وقت اشاعت: 01/12/2016 - 23:28:25 وقت اشاعت: 01/12/2016 - 23:28:25 وقت اشاعت: 01/12/2016 - 23:26:46 وقت اشاعت: 01/12/2016 - 23:26:46
پچھلی خبریں - مزید خبریں

ملتان

زکریایونیورسٹی میں ’’ کپاس کی بڑھوتری اور پیداوار میں پوٹاش کھادوں کی افادیت ‘‘ کے بارے میں آگاہی پر سیمینار

ملتان۔یکم دسمبر(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 01 دسمبر2016ء)بہاء الدین زکریایونیورسٹی زرعی کالج کے شعبہ ایگرانومی میں ’’ کپاس کی بڑھوتری اور پیداوار میں پوٹاش کھادوں کی افادیت ‘‘ کے بارے میں آگاہی سیمینار سے خطاب کرتے ہوئے ڈاکٹر حکومت علی کا کہناتھا کہ نائٹروجن کے بعد فاسفورس اور پھر پوٹاشیم کی پودوں میں بہت اہمیت ہی․ انہوں نے کہاکہ یونیورسٹیز اور ریسرچ اداروں کو چاہیے کہ کسانوں کو جدید ٹیکنالوجی سے آگاہ کریں تاکہ کاشتکار اس ٹیکنالوجی سے گھبرانے کی بجائے فیض یاب ہوں․ ڈاکٹر حبیب الرحمن نے کہاکہ ایسے سیمینار کامیاب مستقبل کے لیے بہترین سیڑھی ہیں․ انہو ںنے کہا کہ اس سال کپاس کی پیداوار میں 16 فی صد سے 20 فی صد اضافہ ہوا ہے جبکہ کاٹن ایریا میں 20 فی صد سے 27 فی صد تک کمی آئی ہی․ انہوں نے کہاکہ ٹیوب ویل کے زیادہ استعمال کی وجہ سے پوٹاش میں کمی ہوتی جارہی ہی․ اور درجہ حرارت کے بڑھنے سے فصلوں کو نقصان لاحق ہی․ ڈاکٹر عبدالوکیل کا کہنا تھا کہ جیسے انسان کی خوراک میں منرلز ضروری ہیں ٹھیک ویسے پودے کی بڑھوتری میں منرلز لازم ہیں․ انہوں

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

01/12/2016 - 23:28:25 :وقت اشاعت