زرعی افسران کاشتکاروں کو تربیتی پروگراموں کے ذریعے جدید ٹیکنالوجی کے بارے میں ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
بدھ نومبر

مزید قومی خبریں

وقت اشاعت: 23/11/2016 - 22:32:42 وقت اشاعت: 23/11/2016 - 22:32:42 وقت اشاعت: 23/11/2016 - 22:32:42 وقت اشاعت: 23/11/2016 - 22:32:42 وقت اشاعت: 23/11/2016 - 22:32:41 وقت اشاعت: 23/11/2016 - 22:31:36 وقت اشاعت: 23/11/2016 - 22:31:34 وقت اشاعت: 23/11/2016 - 22:23:50 وقت اشاعت: 23/11/2016 - 22:23:50 وقت اشاعت: 23/11/2016 - 22:23:50 وقت اشاعت: 23/11/2016 - 22:23:50
پچھلی خبریں - مزید خبریں

ملتان

زرعی افسران کاشتکاروں کو تربیتی پروگراموں کے ذریعے جدید ٹیکنالوجی کے بارے میں مکمل آگاہی دیں، ڈی سی او

ملتان۔23 نومبر(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 23 نومبر2016ء)کھادیں اور زرعی ادویات بنانے والی کمپنیوں کے نمائندے جعلی پیسٹی سائیڈز اور کھادوں میں ملاوٹ کے گھنائونے کاروبار میں ملوث عناصر کی نشاندہی کریں تاکہ ان کے قلع قمع کیلئے قانونی کارروائی عمل میں لائی جاسکے۔ یہ بات ڈی سی او نے ضلعی ایگری کلچر ایڈوائزری کمیٹی اور زرعی ٹاسک فورس سب کمیٹی کے مشترکہ اجلاس کے شرکاء سے خطاب کرتے ہوئے کہی۔

اجلاس میںای ڈی او زراعت شفقت حسین بھٹی، ڈسٹرکٹ آفیسر زراعت (توسیع) چوہدری نصیر احمد، انچارج سائل لیب فیاض احمد، انچارج پیسٹی سائیڈز لیب اشفاق احمد راہی، اسسٹنٹ ڈائریکٹر زرعی اطلاعات نوید عصمت کاہلوں ، رانا ضیاء الحق ممبر ایگریکلچر کمیشن پنجاب سمیت محکمہ زراعت توسیع کے ڈی ڈی اوز، پولیس، ڈسٹرکٹ پبلک پراسیکیوٹر، کاشتکار تنظیموں، بینکوں کے نمائندگان، کراپ لائف و کھاد بنانے والی کمپنیوں کے نمائندگان اور ڈیلرز نے شرکت کی۔

انہوں نے محکمہ زراعت کے افسران کو ہدایت کی کہ وہ شعبہ زراعت کی ترقی اور کسانوں کی خوشحالی و بہتری کے لیے دئیے گئے اہداف کو سوفیصد یقینی بنانے کے لیے اپنی تمام تر صلاحیتیں بروئے کار لائیں۔ اس موقع پر انہوں نے محکمہ زراعت واٹر مینجمنٹ کی ڈرپ و سپرنکلر اریگیشن کی 275ایکڑ کے مقابلہ میں صرف ساڑھے 6ایکڑ رقبہ پر تنصیب کو نہایت مایوس کن اور غیر تسلی بخش قرار دیا اور انہیں ہدایت کی کہ وہ اپنی کارکردگی کو مزید بہتر بنائیں اور دئیے گئے اہداف کے حصول کو یقینی بنائیں۔

انہوں نے محکمہ زراعت کے افسران کو ہدایت کی کہ کاشتکاروں

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

23/11/2016 - 22:31:36 :وقت اشاعت

:متعلقہ عنوان