برطانیہ سے آیا ہوا خاندان ہائی وولٹیج تاروں سے چھو کر جھلسنے والے بچے کو علاج کی ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
اتوار اپریل

مزید قومی خبریں

وقت اشاعت: 27/04/2014 - 19:32:02 وقت اشاعت: 27/04/2014 - 18:49:47 وقت اشاعت: 27/04/2014 - 18:45:31 وقت اشاعت: 27/04/2014 - 18:45:31 وقت اشاعت: 27/04/2014 - 18:42:11 وقت اشاعت: 27/04/2014 - 18:18:33 وقت اشاعت: 27/04/2014 - 17:44:02 وقت اشاعت: 27/04/2014 - 17:44:02 وقت اشاعت: 27/04/2014 - 17:08:29 وقت اشاعت: 27/04/2014 - 17:08:29 وقت اشاعت: 27/04/2014 - 17:04:56
پچھلی خبریں - مزید خبریں

لاہور

برطانیہ سے آیا ہوا خاندان ہائی وولٹیج تاروں سے چھو کر جھلسنے والے بچے کو علاج کی ناکافی سہولیات کے باعث ائیر ایمبولینس کے ذریعے بیرون ملک لے گیا،جناح اور میو ہسپتال کے ڈاکٹروں کی غفلت اور نا تجربہ کاری میں دی جانیوالی طبی امداد کے نتیجے میں بچے کی انگلیاں ضائع ہو گئیں ،اوور سیز والدین کا وزیر اعلیٰ سے برن یونٹس کو فعال ،جدید مشینری اور برن انجری کے سپیشلائز ڈاکٹروں کی تعیناتی کا مطالبہ

لاہور(اُردو پوائنٹ اخبار تازہ ترین۔27اپریل۔2014ء) برطانیہ سے آیا ہوا خاندان لیسکو کی ہائی وولٹیج تاروں سے چھو کر جھلسنے والے نو سالہ بچے کو سرکاری ہسپتالوں میں علاج معالجے کی ناکافی سہولیات اوربرن انجری کے سپیشلائز ڈاکٹر زکی عدم دستیابی کے باعث ائیر ایمبولینس کے ذریعے علاج کی غرض سے برطانیہ لے گیا ،جناح اور میو ہسپتال کے ڈاکٹروں کی غفلت اور نا تجربہ کاری میں دی جانیوالی طبی امداد کے نتیجے میں بچے کی انگلیاں ضائع ہو گئیں ،اوور سیز والدین نے وزیر اعلیٰ پنجاب سے سرکاری ہسپتالوں میں برن یونٹس کو فعال ،جدید مشینری اور جھلسے ہوئے مریضوں کے علاج کیلئے سپیشلائز ڈاکٹروں کی تعیناتی کا مطالبہ کر دیا ۔

عرصہ بیس سال سے برطانیہ میں مقیم پاکستانی شکیل طارق نے وزیر اعلیٰ پنجاب محمد شہباز شریف کے نام اپنے کھلے خط میں حادثے سے متعلق بتایا کہ وہ اپنے والد کے انتقال اپنے چار بچوں اور بیوی کے ہمراہ برطانیہ سے مکہ کالونی گلبرگ آیا ہوا ۔رواں ماہ کی 17تاریخ کو ان کا نو سالہ بیٹا دانیال پہلی منزل کی ٹیرس پر کھیلتے ہوئے اپنا تواز بر قرار نہ رکھ سکا اورگرنے سے بچنے کیلئے پہلی منزل کے قریب سے گزرتی ہوئی لیسکو کی ہائی وولٹیج 11کے وی کی تاروں جنہیں پلاسٹک بھی لپیٹ رکھا تھا کو پکڑنا پڑا جس پر ایک دھماکہ ہوا اور کرنٹ لگنے سے ان کا بیٹا دیوار میں جا لگا جس پر دانیال کو فوری نزدیکی نجی ہسپتال لیجایا گیا تاہم برن یونٹ نہ ہونے کی وجہ سے ابتدائی طبی امداد دے کر اسے میو ہسپتال بھجوایا گیا ۔

انہوں نے بتایا کہ مریض کی تشویشناک حالت کے باوجود میو ہسپتال برن یونٹ کے عملے نے بتایا کہ ہمارے پاس کم از کم

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

27/04/2014 - 18:18:33 :وقت اشاعت

:متعلقہ عنوان