عدلیہ سستا اور فوری انصاف یقینی بنائے :چیف جسٹس
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
ہفتہ مارچ

مزید اہم خبریں

وقت اشاعت: 08/03/2014 - 23:58:28 وقت اشاعت: 08/03/2014 - 23:58:28 وقت اشاعت: 08/03/2014 - 23:56:00 وقت اشاعت: 08/03/2014 - 23:50:32 وقت اشاعت: 08/03/2014 - 22:59:46 وقت اشاعت: 08/03/2014 - 22:36:22 وقت اشاعت: 08/03/2014 - 22:23:41 وقت اشاعت: 08/03/2014 - 22:23:41 وقت اشاعت: 08/03/2014 - 22:23:41 وقت اشاعت: 08/03/2014 - 22:22:01 وقت اشاعت: 08/03/2014 - 22:22:01
- مزید خبریں

لاہور

عدلیہ سستا اور فوری انصاف یقینی بنائے :چیف جسٹس

لاہور(اُردو پوائنٹ اخبار تازہ ترین۔8مارچ۔2014ء)سپریم کورٹ پاکستان کے چیف جسٹس مسٹر جسٹس تصدق حسین جیلانی نے کہا ہے کہ فوری اور سستے انصاف کی فراہمی عدلیہ کی اولین ذمے داری اور ترجیح ہے۔ اس سلسلے میں انصاف کے اداروں کو مضبوط بنانا ہوگا۔ وہ گذشتہ روز سپریم کورٹ لاہور رجسٹری میں قومی عدالتی پالیسی ساز کمیٹی کے اجلاس سے خطاب کر رہے تھے انہوں نے کہا کہ فوری اور سستے انصاف کی فراہمی عدلیہ کی اولین ترجیح ہے لہذا تمام سطح کی عدالتوں میں بروقت انصاف کی فراہمی یقینی بنائی جائے۔

انہوں نے کہا کہ کہ اٹھارہ سے انیس اپریل تک عالمی عدالتی کانفرنس کا انعقاد کیا جائے گا۔اجلاس کے دوران چیف جسٹس نے ماتحت عدلیہ کی جانب سے زیر التوا مقدمات نمٹانا خوش آئند قرار دیتے ہوئے کہا کہ لوگوں کو فوری اور سستے انصاف کی فراہمی عدلیہ کی ذمہ داری ہے، اس کے علاوہ آئین کے تحت عدلیہ کی یہ بھی ذمہ داری ہے وہ اچھی کارکردگی کا مظاہرہ کرے، اس سلسلے میں حکومت سے کہا تھا کہ عدالتوں میں ججزکی تعداد بڑھائیں تاکہ فیصلے جلد کئے جاسکیں اور فیصلے کرنے میں آسانی بھی ہو۔

تارکین وطن پاکستانی ملک کی معاشی ترقی میں اہم کردار ادا کررہے ہیں۔ سپریم کورٹ کا سیل ان کی شکایات کا ازالہ کررہا ہے۔چیف جسٹس نے عدلیہ پر زور دیا کہ وہ عوام کو تیز تر اور سستے انصاف کی

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

08/03/2014 - 23:58:28 :وقت اشاعت