وزیر اعظم طالبان کے ساتھ مذاکرات کی کامیابی کیلئے وزیر وں مشیروں کی بیان بازی ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
ہفتہ مارچ

مزید اہم خبریں

وقت اشاعت: 08/03/2014 - 22:10:17 وقت اشاعت: 08/03/2014 - 22:02:19 وقت اشاعت: 08/03/2014 - 22:02:19 وقت اشاعت: 08/03/2014 - 21:58:01 وقت اشاعت: 08/03/2014 - 21:03:08 وقت اشاعت: 08/03/2014 - 20:21:06 وقت اشاعت: 08/03/2014 - 20:18:01 وقت اشاعت: 08/03/2014 - 20:18:01 وقت اشاعت: 08/03/2014 - 20:18:01 وقت اشاعت: 08/03/2014 - 20:16:44 وقت اشاعت: 08/03/2014 - 20:15:43
پچھلی خبریں - مزید خبریں

لاہور

وزیر اعظم طالبان کے ساتھ مذاکرات کی کامیابی کیلئے وزیر وں مشیروں کی بیان بازی پر پابندی لگائیں ‘ سید منور حسن ،وزیر دفاع کا بیان ”طالبان سے مذاکرات کامیاب نہ ہوئے تو آپریشن کے سوا کوئی چار ہ نہیں“ قومی پالیسی سے متصادم ہے،فوج کی طرف سے مذاکراتی عمل کا حصہ نہ بننے اور حکومت کے ساتھ تعاون کرنے کا بیان خوش آئند ہے‘ امیر جماعت اسلامی

لاہور (اُردو پوائنٹ اخبار تازہ ترین۔8مارچ۔2014ء) امیر جماعت اسلامی سید منورحسن نے وزیر دفاع کی طرف سے دیئے گئے بیان ”طالبان سے مذاکرات کامیاب نہ ہوئے تو آپریشن کے سوا کوئی چار ہ نہیں“ پر تبصرہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ وزیر اعظم طالبان کے ساتھ مذاکرات کی کامیابی کیلئے وزیر وں مشیروں کی بیان بازی پر پابندی لگائیں ،جب وزیر داخلہ فوکل پرسن ہیں تو پھر بھانت بھانت کی بولیاں بولنے والوں کو کیوں نہیں روکا جارہا ،خواجہ آصف کا برطانوی نشریاتی ادارے کو دیا گیا انٹر ویو قومی پالیسی سے متصادم ہے ۔

سید منورحسن نے کہا کہ فوج کی طرف سے مذاکراتی عمل کا حصہ نہ بننے اور حکومت کے ساتھ تعاون کرنے کا بیان خوش آئند ہے، سیکیورٹی اداروں کوطالبان کی طرف سے جنگ بندی کے معاہدے کے بعد ہونے والی دہشت گردی کے پیچھے موجود بیرونی ہاتھ کا کھوج لگا نا چاہیے اور مذاکرات کی کامیابی کیلئے اپنا موثر کردار ادا کرنا چاہئے طالبان کی طرف سے جنگ بندی کے بعد ہونے والے واقعات کو طالبان سے منسوب کرنا افسوس ناک ہے جبکہ وہ ان واقعات سے لا تعلقی کا اظہار کررہے ہیں ۔

سید منورحسن نے کہا کہ حکومتی اہلکار وں خاص طور پر وزراء کے ملکی و غیر ملکی میڈیا پر اپنی خواہشات کے اظہار سے مذاکراتی عمل کو نقصان پہنچنے کا اندیشہ ہے،حکومت کی طرف سے نامزد فوکل پرسن کو ہی اس اہم قومی مسئلے پر رائے زنی کی اجازت ہونی چاہئے ،انہوں نے کہا کہ وزیر اعظم کو فوری طور پر اس کا نوٹس لینا چاہئے اور کابینہ کی میٹنگ بلا کر تمام وزراء اور مشیروں کو اس مسئلے کی نزاکتوں سے آگاہ کرنا چاہئے تاکہ امن دشمن قوتوں کے مکروہ عزائم کو ناکام بنایا جاسکے ۔

دریں اثناء سید منورحسن نے وفاقی و صوبائی حکومتوں کی لا پرواہی سے تھر میں سینکڑوں بچوں کی ہلاکتوں اور عوام

مکمل خبر پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

08/03/2014 - 20:21:06 :وقت اشاعت