آپر یشن کے تلخ تجربات کو دہرانے اور دہشت گردی کے بیج بونے کے بجائے امن کو ایک بار ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
ہفتہ فروری

مزید اہم خبریں

وقت اشاعت: 15/02/2014 - 22:36:28 وقت اشاعت: 15/02/2014 - 22:36:28 وقت اشاعت: 15/02/2014 - 22:22:54 وقت اشاعت: 15/02/2014 - 22:22:54 وقت اشاعت: 15/02/2014 - 22:22:54 وقت اشاعت: 15/02/2014 - 22:19:58 وقت اشاعت: 15/02/2014 - 22:19:58 وقت اشاعت: 15/02/2014 - 22:13:53 وقت اشاعت: 15/02/2014 - 21:06:07 وقت اشاعت: 15/02/2014 - 21:04:33 وقت اشاعت: 15/02/2014 - 21:04:33
پچھلی خبریں - مزید خبریں

لاہور

آپر یشن کے تلخ تجربات کو دہرانے اور دہشت گردی کے بیج بونے کے بجائے امن کو ایک بار نہیں سو بار موقع دینا چاہئے ‘ سید منور حسن ،مذاکرات مسائل کا واحد حل ہے ،وزیر اعظم نے امن کی بحالی کیلئے مذاکرات کا فیصلہ کرکے ملک کو بدامنی کی دلدل میں دھکیلنے کی کوششوں کو ناکام بنادیا ،قوم کومولانا سمیع الحق کی طرف سے معاملے کو سلجھانے کی گراں قدر کوششوں کا ساتھ دینا چاہئے‘ امیر جماعت اسلامی کا علماء کنونشن سے خطاب

لاہور (اُردو پوائنٹ اخبار تازہ ترین۔15 فروری ۔2014ء) امیر جماعت اسلامی سید منورحسن نے کہا ہے کہ ملک و ملت کو بدامنی اور دہشت گردی کے عفریت کا سامنا ہے ،جس کا واحدحل مذاکرات ہیں ، وزیر اعظم نے امن کی بحالی کیلئے مذاکرات کا فیصلہ کرکے ملک کو بدامنی کی دلدل میں دھکیلنے کی کوششوں کو ناکام بنادیا ، اب مذاکرات کی کامیابی کیلئے بھی تمام محب وطن قوتوں کو ایک پیج پر متحد ہونا چاہیے، طالبان اور حکومت دونوں کی طرف سے فوری سیز فائر ہونا چاہئے،ملک بھر کے علماء قیام امن کیلئے مذاکرات کی کامیابی کیلئے متحد ہیں ،آپر یشن کے تلخ تجربات کو دہرانے اور دہشت گردی کے بیج بونے کے بجائے امن کو ایک بار نہیں سو بار موقع دینا چاہئے ،جمہوریت کی ناکامی پر مزید جمہوریت کی کوشش کی جاتی ہے آمریت کو کوئی دعوت نہیں دیتا، امریکی لابی مذاکرات کے بجائے ملٹری آپریشن کے خواب دیکھ رہی تھی تاکہ امن کی کوششوں کو تہس نہس کیا جاسکے ، وزیر اعظم کی طرف سے مذاکرات کے اعلان کے بعد ان کے سینوں پر سانپ لوٹ رہے ہیں ،حکومتی اور طالبان کمیٹی نے انتہائی تدبر سے کام لیا ہے،قوم کومولانا سمیع الحق کی طرف سے معاملے کو سلجھانے کی گراں قدر کوششوں کا ساتھ دینا چاہئے،پاکستان امت مسلمہ کی قیادت اسی صورت کرسکے گا جب اندرونی طور پر پر امن اور مستحکم ہوگا ،اسی لئے اسلام و ملک دشمن قوتیں پاکستان کو عدم استحکام سے دوچار رکھنا چاہتے ہیں،امریکہ اور بھارت نہیں چاہتے کہ طالبان کے ساتھ حکومت کے مذاکرات کامیاب ہوں۔

ان خیالات کا اظہار انہوں نے مقامی ہوٹل میں جمعیت علمائے اسلام (س) کے زیر اہتمام منعقدہ علما ء کنونشن سے خطاب کرتے ہوئے کیا ۔کنونشن میں 32دینی جماعتوں کے سربراہان اور نمائندوں نے شرکت کی اور حکومت اور

مکمل خبر پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

15/02/2014 - 22:19:58 :وقت اشاعت