عمران خان کااعتزاز حسن کے معاملے پر خیبر پختونخواہ حکومت کے رویے پر مایوسی کااظہار ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
اتوار جنوری

مزید اہم خبریں

وقت اشاعت: 12/01/2014 - 15:56:24 وقت اشاعت: 12/01/2014 - 15:55:51 وقت اشاعت: 12/01/2014 - 15:55:51 وقت اشاعت: 12/01/2014 - 15:54:44 وقت اشاعت: 12/01/2014 - 15:52:25 وقت اشاعت: 12/01/2014 - 15:52:25 وقت اشاعت: 12/01/2014 - 15:52:25 وقت اشاعت: 12/01/2014 - 15:51:53 وقت اشاعت: 12/01/2014 - 15:50:49 وقت اشاعت: 12/01/2014 - 15:50:49 وقت اشاعت: 12/01/2014 - 15:50:14
پچھلی خبریں - مزید خبریں

لاہور

عمران خان کااعتزاز حسن کے معاملے پر خیبر پختونخواہ حکومت کے رویے پر مایوسی کااظہار ،اہلخانہ کی کفالت کا اعلان ، امریکہ نے نیٹو سپلائی کھولنے کے حوالے سے کوئی رابطہ نہیں کیا ‘ڈرون حملے بند کرنے کی یقین دہانی تک نیٹو سپلائی نہیں کھولیں گے،پولیس کا نیلم اشرف کے صاحبزادے کے معاملے میں پوسٹمارٹم سے قبل واقعے کوخود کشی قرار دینا انتہائی افسوسناک ہے ،وزیراعلی نوٹس لیں

لاہور(اُردو پوائنٹ اخبار تازہ ترین۔12 جنوری ۔2014ء) پاکستان تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان نے ہنگو کے نوجوان شہید اعتزاز حسن کے معاملے پر خیبر پختونخواہ حکومت کے رویے پر انتہائی مایوسی کااظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ تحریک انصاف شہید کے اہل خانہ کی مکمل کفالت کرے گی ‘ امریکہ نے نیٹو سپلائی کھولنے کے حوالے سے کوئی رابطہ نہیں کیا ‘حکمران ڈالر کے پجاری ہیں لیکن خیبرپختوانخواہ میں نیٹو سپلائی اس وقت تک بند رہے گی جب تک امریکہ ڈرون حملے بند کرنے کی یقین دہانی نہیں کر ادیتا ،پولیس کا نیلم اشرف کے صاحبزادے کے معاملے میں پوسٹمارٹم سے قبل واقعے کوخود کشی قرار دینا انتہائی افسوسناک ہے ،وزیراعلی پنجاب واقعہ کا نوٹس لیں اور معاملے کی مکمل تحقیقات کرا ئی جائے ۔

ان خیالات کااظہار انہوں نے تحریک انصاف ویمن ونگ لاہور کی صدر نیلم اشر ف کے جواں سال صاحبزادے کے انتقال پراظہار تعزیت کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کیا ۔ عمران خان نے کہا کہ پنجاب پولیس میں میرٹ پر بھرتیاں نہیں ہوتیں اور پولیس کو سیاسی مقاصد کے لئے استعمال کیا جا رہا ہے جس کی وجہ سے پولیس کا میعار گرتا جا رہا ہے اور جرائم کی شرح میں مسلسل اضافہ ہوتا جا رہا ہے۔

ایس ایس پی طارق عزیز نے میڈیا کو فون کرکے بتایا کہ نیلم اشرف کے صاحبزادے نے خود کشی کی ہے حالانکہ پوسٹ مارٹم کے بغیر ہی واقعے کو خودکشی قرار نہیں دیا جا سکتا ۔انہوں نے مقتول کی والدہ کے حوالے سے بتایا کہ جب انکا صاحبزادہ اپنی منگیتر سے ٹیلیفون پر بات کررہا تھا تواسے اس وقت قتل کیا گیا ۔جب وہ منگیتر سے بات کررہاتھا تووہ خود کشی کیسے کر سکتا ہے ۔

وزیراعلی

مکمل خبر پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

12/01/2014 - 15:52:25 :وقت اشاعت