سندھ پولیس میں سنگین بے ضابطگیوں کا انکشاف
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
بدھ مارچ

مزید اہم خبریں

وقت اشاعت: 25/03/2015 - 16:49:38 وقت اشاعت: 25/03/2015 - 16:47:56 وقت اشاعت: 25/03/2015 - 16:47:56 وقت اشاعت: 25/03/2015 - 16:47:56 وقت اشاعت: 25/03/2015 - 16:37:32 وقت اشاعت: 25/03/2015 - 16:37:32 وقت اشاعت: 25/03/2015 - 16:37:32 وقت اشاعت: 25/03/2015 - 16:30:11 وقت اشاعت: 25/03/2015 - 16:24:58 وقت اشاعت: 25/03/2015 - 16:22:59 وقت اشاعت: 25/03/2015 - 16:21:51
پچھلی خبریں - مزید خبریں

کراچی

سندھ پولیس میں سنگین بے ضابطگیوں کا انکشاف

کراچی(اُردو پوائنٹ اخبار تازہ ترین۔25مارچ۔2015ء) سندھ پولیس میں سنگین فراڈکاانکشاف ہوا ہے جس کے تحت جعلی دستخط کی بنیاد پر 20 برس قبل ملازمت سے برطرف کیے گئے 2 اہلکار بحال ہوگئے،اسی طرح تبادلے وتقرریوں کے علاوہ سینیارٹی لسٹوں میں ردوبدل کے بھی کئی کیسز سامنے آئے ہیں۔تفصیلات کے مطابق سندھ پولیس میں سنگین فراڈ کا انکشاف ہوا ہے جس کے تحت اعلی افسر کے جعلی دستخط کی بنیاد پر نہ صرف تبادلے و تقرریاں کی جارہی ہیں بلکہ ملازمت سے برطرف 2 اہلکاروں کو بحال کردیا گیا،اہلکاروں کو 12اگست 1995اور27 جولائی 1994 کو برطرف کیا گیا جوکہ اعلی افسرکے جعلی دستخط کی بنیاد پر20 برس بعد 2015 میں بحال ہوگئے، اس کے علاوہ کئی ایسے اہلکار ہیں جواسی طرح اپنی من پسند پوسٹوں پر تعیناتیاں حاصل کرتے رہے۔

برطرف اہلکار جب جوائننگ پر پہنچے اور لیٹر جمع کرایا تو حکام کوشک گزرا، اسی طرح جب دواہلکار تبادلہ

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

25/03/2015 - 16:37:32 :وقت اشاعت

:متعلقہ عنوان