پاکستان کی سمندری حدود میں پچاس ہزار مربع کلومیٹر اضافہ ہو گیا
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
جمعہ مارچ

کراچی

پاکستان کی سمندری حدود میں پچاس ہزار مربع کلومیٹر اضافہ ہو گیا

کراچی (اُردو پوائنٹ اخبار تازہ ترین۔20مارچ2015ء)پاکستان کی سمندری حدود میں پچاس ہزار مربع کلومیٹر اضافہ ہو گیا، سمندر کی تہہ میں پائے جانے والے وسائل پر بھی پاکستان کو مکمل کنٹرول ہوگا ۔ اقوام متحدہ کے کمیشن برائے سمندری حدود نے انیس مارچ 2015 کو اپنا جائزہ مکمل کیا جس کے بعد سمندری حدود میں اضافے کا پاکستانی دعویٰ تسلیم کر لیا ہے۔ پاکستان کی سمندری حدود 200 ناٹیکل میل سے بڑھ کر 350 ناٹیکل میل ہو گئی ہے ۔

پاکستان کے موجودہ 240,000مربع کلو میٹرخصوصی اقتصادی زون کے علاوہ پچاس ہزار مربع کِلو میٹر کا اِضافی کونٹی نینٹل شیلف پاکستان کے زیرِ انتظام آ گیا ہے ۔ پاکستان کو ملنے والے اس اضافی سمندر اور اس کے نیچے پائے جانے والے وسائل پر مکمل اختیارات حاصل ہوں گے ۔ بین الاقوامی سمندری قوانین کا آرٹیکل 76 ساحلی ممالک کو کونٹی نینٹل شیلف 200 سو ناٹیکل میل سے بڑھانے کی اِجازت دیتا ہے تاہم ساحلی مُلک کو اقوام متحدہ کمیشن برائے سمندری

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

20/03/2015 - 11:02:17 :وقت اشاعت

:متعلقہ عنوان