کیمبرج سکول کی کتاب میں شامل مواد پرنثار کھوڑو کااظہار تشویش
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
بدھ مارچ

مزید اہم خبریں

وقت اشاعت: 18/03/2015 - 13:24:17 وقت اشاعت: 18/03/2015 - 13:16:00 وقت اشاعت: 18/03/2015 - 13:16:00 وقت اشاعت: 18/03/2015 - 13:14:59 وقت اشاعت: 18/03/2015 - 13:14:59 وقت اشاعت: 18/03/2015 - 13:14:59 وقت اشاعت: 18/03/2015 - 13:11:12 وقت اشاعت: 18/03/2015 - 13:10:49 وقت اشاعت: 18/03/2015 - 13:10:49 وقت اشاعت: 18/03/2015 - 13:04:16 وقت اشاعت: 18/03/2015 - 13:03:40
پچھلی خبریں - مزید خبریں

کراچی

کیمبرج سکول کی کتاب میں شامل مواد پرنثار کھوڑو کااظہار تشویش

کراچی(اُردو پوائنٹ اخبار تازہ ترین۔18مارچ۔2015ء)سندھ کے سینئر وزیر برائے تعلیم نثار کھوڑو نے کیمبرج کے نصاب کے تحت کئی اسکولوں میں پڑھائی جانے والی تاریخ کی ایک کتاب کے کچھ حصوں پر اپنی تشویش کا اظہار کرتے ہوئے ہدایت کی ہے کہ غلط تاثر پیدا کر نے والے حصوں کو خارج کیا جائے نجی ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق لندن کی پیک پبلشنگ لمیٹڈ کی جانب سے ایک ٹیکسٹ بک کا حالیہ ایڈیشن ”پاکستانی تاریخ اور ثقافت“ کے عنوان سے شایع کیا گیا اس کتاب کے مصنف نیگل کیلی ہیں اس کے ایک حصے میں ’خاندانی تنازعات‘ کی ذیلی سرخی کے ساتھ کہا گیا”ستمبر 1996ء میں مرتضیٰ کو کراچی میں اْن کی رہائشگاہ پر ایک پولیس حملے میں قتل کردیا گیا تھااس میں ملوث کسی بھی پولیس اہلکار کو گرفتار نہیں کیا گیا اور کچھ کو بعد میں ترقی دے دی گئی۔

ایک عدالتی جائزے میں کہا گیا تھا کہ اس ہلاکت میں حکومت شامل تھی اور اس کے بعد سے بے نظیر بھٹو کے لیے حمایت میں مزید کمی واقع ہوئی۔”ایک مخلوط حکومت کی تشکیل کے لیے ایم کیو ایم کی حمایت حاصل کرتے ہوئے بے نظیر بھٹوں نے عہد کیا تھا کہ وہ محض سندھی بولنے والوں کا ہی نہیں بلکہ سندھ کے تمام لوگوں کے مفادات کا تحفظ کریں گی اور تشدد کے خاتمے کے لیے اقدامات کریں گی تاہم وہ ایسا کرنے کے قابل نہیں تھیں، اور سندھی اور مہاجروں کے درمیان کشیدگی بڑھتی چلی گئی۔

“”تیس ستمبر 1998ء موٹرسائیکل پر سوار مسلح افراد، جنہیں سندھی عسکریت پسند خیال کیا جاتا تھا، حیدرآباد میں

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

18/03/2015 - 13:14:59 :وقت اشاعت