صولت مرزا کی سزا پر عمل درآمد پر اعتراض نہیں، الطاف حسین
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
بدھ مارچ

مزید اہم خبریں

وقت اشاعت: 11/03/2015 - 22:47:40 وقت اشاعت: 11/03/2015 - 22:47:40 وقت اشاعت: 11/03/2015 - 22:38:47 وقت اشاعت: 11/03/2015 - 22:38:47 وقت اشاعت: 11/03/2015 - 22:38:47 وقت اشاعت: 11/03/2015 - 22:38:29 وقت اشاعت: 11/03/2015 - 22:34:58 وقت اشاعت: 11/03/2015 - 22:34:58 وقت اشاعت: 11/03/2015 - 22:28:00 وقت اشاعت: 11/03/2015 - 22:28:00 وقت اشاعت: 11/03/2015 - 22:28:00
پچھلی خبریں - مزید خبریں

کراچی

صولت مرزا کی سزا پر عمل درآمد پر اعتراض نہیں، الطاف حسین

کراچی(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔11مارچ۔2015ء)متحدہ قومی موومنٹ کے قائد الطاف حسین نے کہا ہے کہ اگر صولت مرزا کی سزا پر عمل درآمد ہوگیا تو انہیں کوئی اعتراض نہیں ہوگا۔ ڈان نیوز کے مطابق ایک انٹرویو میں الطاف حسین کایہ بھی کہنا تھا کہ چھاپہ مارنا ہی رینجرز کی نیت تھی تو ان کی بہن کے گھر چھاپا کیوں مارا گیا۔ انہوں نے مزید کہا کہ اگر نائن زیرو کے آس پاس جرائم پیشہ افراد موجود ہیں تو نام بتائیں ہم خود لا کر دینگے۔

اس سے قبل انسداد دہشت گردی کی خصوصی عدالت نے صولت مرزا کے ڈیتھ وارنٹس جاری کردیئے ہیں۔ عدالتی احکامات کے مطابق صولت مرزا کو رواں ماہ 19 مارچ کو پھانسی دی جائے گی۔ واضح رہے کہ بدھ کو کراچی کی سینٹرل جیل حکام کی جانب سے پھانسی کے منتظرایم کیو ایم کے کارکن صولت مرزا کی سزا پر عمل درآمد کے لیے انسداد دہشت گردی عدالت کو خط ارسال کیا گیا تھا۔

صولت مرزا کو جولائی 1997 میں کراچی الیکٹرک سپلائی کارپوریشن (کے ای ایس سی)، جو اب کے۔ الیکٹرک کے نام سے جانی جاتی ہے، کے مینیجنگ ڈائریکٹر شاہد حامد، ان کے ڈرائیور اشرف بروہی اور گارڈ خان اکبر کو قتل کرنے کے جرم میں 1999 میں انسداد دہشت گردی عدالت کی جانب سے پھانسی کی سزا سنائی گئی تھی۔ سیکیورٹی کی صورتحال کو مد نظر رکھتے

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

11/03/2015 - 22:38:29 :وقت اشاعت