سارک پیمنٹس کونسل کا سولہویں اجلاس ؛سارک خطے کے لیے ورچوئل کرنسی اور واحد ہم آہنگ ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
منگل مارچ

مزید اہم خبریں

وقت اشاعت: 10/03/2015 - 21:57:06 وقت اشاعت: 10/03/2015 - 21:57:06 وقت اشاعت: 10/03/2015 - 21:54:49 وقت اشاعت: 10/03/2015 - 21:54:49 وقت اشاعت: 10/03/2015 - 21:54:49 وقت اشاعت: 10/03/2015 - 21:52:23 وقت اشاعت: 10/03/2015 - 21:45:22 وقت اشاعت: 10/03/2015 - 21:42:19 وقت اشاعت: 10/03/2015 - 21:42:19 وقت اشاعت: 10/03/2015 - 21:42:19 وقت اشاعت: 10/03/2015 - 21:40:56
پچھلی خبریں - مزید خبریں

کراچی

سارک پیمنٹس کونسل کا سولہویں اجلاس ؛سارک خطے کے لیے ورچوئل کرنسی اور واحد ہم آہنگ ادائیگی کے نظام کے تصور پر غور

کراچی(اردو پوائنٹ تازہ ترین اخبار .10 مارچ 2015ء)سارک پیمنٹس کونسل کے سولہویں اجلاس میں ورچوئل کرنسی اور سارک خطے کے لیے واحد ہم آہنگ ادائیگی کے نظام کے تصور پر غور وخوض کیا گیا۔حال ہی میں لاہور میں اسٹیٹ بینک آف پاکستان کے ڈپٹی گورنر اور کونسل کے چیئرمین قاضی عبدالمقتدر کی سربراہی میں منعقد ہوا۔ اس اجلاس میں سارک ممالک کے مرکزی بینکوں کے وفود نے شرکت کی۔

سارک پے منٹ انیشیٹو کا آغاز سارک فنانس گروپ کے مرکزی بینک کے گورنروں کے زیر اہتمام 2007 میں ہوا تھا جس کا بنیادی مقصد سارک خطے کے ادائیگی اور چکتائی کے نظاموں (پی ایس ایس) کو مضبوط بنانا ہے تا کہ سارک خطے میں ایک مستعد، متحرک، مستحکم اور مرتکز پی ایس ایس کے قیام میں سہولت مل سکے۔پاکستان کا مرکزی بینک سارک پیمنٹ کونسل سیکریٹریٹ کا میزبان ہے اور ڈپٹی گورنر اسٹیٹ بینک کو اس کا چیئرمین نامزد کیا گیا ہے۔

دیگر امور کے علاوہ کونسل کو سارک کے ہر رکن ملک نے اپنے ادائیگیوں اور چکتائی کے نظاموں کو ترقی دینے اور انہیں مضبوط بنانے اور اپنی متعلقہ حدود میں قائم کیے گئے انفرااسٹرکچر کی سطح پر ہونے والی پیش رفت سے بھی ا?گاہ کیا گیا۔ ورچوئل کرنسیوں اور سارک خطے کے لیے واحد ہم آہنگ ادائیگی کے نظام کے تصور کے معاملے پر یہ اتفاق

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

10/03/2015 - 21:52:23 :وقت اشاعت