صدر کے سی سی آئی افتخار احمد وہرہ کا کراچی کے تاجروں کو درپیش مسائل کے حل کے حوالے ..
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
پیر مارچ

مزید اہم خبریں

وقت اشاعت: 09/03/2015 - 21:37:19 وقت اشاعت: 09/03/2015 - 21:37:19 وقت اشاعت: 09/03/2015 - 21:29:31 وقت اشاعت: 09/03/2015 - 21:29:31 وقت اشاعت: 09/03/2015 - 21:27:29 وقت اشاعت: 09/03/2015 - 21:27:29 وقت اشاعت: 09/03/2015 - 21:23:56 وقت اشاعت: 09/03/2015 - 21:23:56 وقت اشاعت: 09/03/2015 - 21:20:47 وقت اشاعت: 09/03/2015 - 21:20:47 وقت اشاعت: 09/03/2015 - 21:20:47
پچھلی خبریں - مزید خبریں

کراچی

صدر کے سی سی آئی افتخار احمد وہرہ کا کراچی کے تاجروں کو درپیش مسائل کے حل کے حوالے سے حکومتی رویے پرشدید مایوسی کا اظہار

کراچی (اردو پوائنٹ تازہ ترین اخبار . 9 مارچ 2015ء)کراچی چیمبرآف کامرس اینڈ انڈسٹری(کے سی سی آئی) کے صدر افتخار احمد وہرہ نے کراچی کے تاجروں کو درپیش مسائل کے حل کے حوالے سے حکومتی رویے پرشدید مایوسی کا اظہار کرتے ہوئے خبردار کیا ہے کہ اگریہ غیر ذمہ دارانہ طرز عمل جاری رہا اور ملک کے سب سے بڑے چیمبر ہونے کے ساتھ ساتھ قومی دھارے اور اقتصادی سرگرمیوں میں پیش پیش کراچی چیمبر کی جانب سے اجاگر کیے گئے مسائل کو حل کرنے میں سنجیدگی کا مظاہرہ نہیں کیا گیاتو اس کے انتہائی منفی نتائج مرتب ہوں گے۔

کے سی سی آئی کے صدر نے کراچی چیمبر سے جاری ایک بیان میں نشاندہی کرتے ہوئے کہاکہ درجنوں خطوط اور یاددہانیوں پر مشتمل خط مختلف وزراء خا ص طور پر وفاقی وزیر خزانہ اسحاق ڈار، وزیرتجارت خرم دستگیر ،چیئرمین فیڈرل بورڈ آف ریونیو طارق باجوہ و دیگر کو ارسال کیے گئے اور کراچی چیمبر کے دورے کی دعوت دی گئی جس کا مقصد تاجربرادری کو درپیش مسائل پرتفصیلی تبادلہ خیال کرنا تھا مگربدقسمتی سے ان میں سے کسی نے بھی کراچی چیمبر کا دورہ کرنے کی زحمت گوارہ نہیں کی جو کہ تاجربرادری کے لیے تشویش کا باعث ہے۔

افتخار احمد وہرہ نے کہاکہ ان وزراء کے پاس ٹی وی چینلز کے ٹاک شوز میں شرکت کرنے،سیاسی بیانات دینے، بڑے بڑے دعوے کرنے اور مخالفین کے جوابات دینے کاتو وقت ہے لیکن تاجربرادری کے مسائل سننے کے لیے ان کے پاس وقت نہیں۔انہوں نے کراچی کے تاجروصنعتکاروں کی اکثریت کی نمائندہ کراچی چیمبر آف کامرس کو نظرانداز کرنے پر احتجاج کرتے ہوے کہا کہ انہوں نے وقتاً فوقتاً اسلام آباد کے دورے کے موقع پرسینئر وزراء کو تاجربرادری کے مسائل سننے کے لیے کراچی چیمبر کے دورے کی دعوت بھی دی اور ان وزراء نے یقین دہانیاں بھی کروائیں مگر پھر بھی کے سی سی آئی کا دورہ نہیں کیا جواس امر کا اشارہ دیتا ہے کہ وہ نہ تو کراچی کی تاجربرادری سے ملنے میں دلچسپی رکھتے ہیں اور نہ ہی انہیں آن بورڈ لینا چاہتے ہیں۔

کے سی سی آئی کے صدر نے اس بات کی بھی نشاندہی کی کہ کراچی کے ساتھ غیرمہذب حربے رواں رکھنے کے علاوہ سوتیلی ماں جیسا سلوک کیاجاتاہے جبکہ مختلف محکمے بے جااختیارات استعمال کرتے ہوئے صرف کراچی کے ایماندار ٹیکس گزاروں کو مزید نچوڑنے پرتلے ہیں۔کراچی چیمبر کو روزانہ ٹیکس سے متعلق بے شمار شکایات موصول ہوتی ہیں۔امن وامان کی بگڑتی صورتحال،بجلی پانی و گیس بحران،انفراسٹرکچر اور

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

09/03/2015 - 21:27:29 :وقت اشاعت

:متعلقہ عنوان