کراچی میں سارے حکومتی نظام مفلوج ہوچکے ہیں،عتیق میر
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
جمعہ مارچ

مزید قومی خبریں

وقت اشاعت: 06/03/2015 - 17:14:10 وقت اشاعت: 06/03/2015 - 17:03:03 وقت اشاعت: 06/03/2015 - 17:03:03 وقت اشاعت: 06/03/2015 - 16:44:02 وقت اشاعت: 06/03/2015 - 16:44:02 وقت اشاعت: 06/03/2015 - 16:37:53 وقت اشاعت: 06/03/2015 - 16:37:53 وقت اشاعت: 06/03/2015 - 16:36:45 وقت اشاعت: 06/03/2015 - 16:36:45 وقت اشاعت: 06/03/2015 - 16:34:35 وقت اشاعت: 06/03/2015 - 16:34:21
پچھلی خبریں - مزید خبریں

کراچی

کراچی میں سارے حکومتی نظام مفلوج ہوچکے ہیں،عتیق میر

کراچی(اُردو پوائنٹ اخبار تازہ ترین۔06مارچ۔2015ء) آل کراچی تاجر اتحاد کے چیئرمین عتیق میر نے شہر میں بدامنی اور بدانتظامی کی بدترین صورتحال پر سخت تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ کراچی میں سارے حکومتی نظام مفلوج ہوچکے ہیں،حکومتِ سندھ کے ماتحت کوئی بھی ادارہ اپنے سربراہ کے دباؤ میں نہیں رہا، عملے کی من مانیاں بے لگام افسران مادر پدر آزاد ہوگئے، وزیرِاعلی،وزراء، کمشنر، ایڈمنسٹریٹر، آئی جی اور دیگر سربراہان صرف بیانان سے کام چلارہے ہیں، سرکاری اجلاسوں میں کیئے گئے فیصلوں کی زندگی اجلاسوں کی برخاستگی سے زیادہ نہیں ہوتی، انھوں نے کہا کہ حکومتِ سندھ کی غفلتوں نے کراچی کی ترقی پر جھاڑو پھیردی ہے، اب سڑکوں پر جھاڑو لگاکر کیا ثابت کیا جا رہا ہے، انھوں آرمی چیف اور ڈی جی رینجرز سے اپیل کرتے ہوئے کہا ہے کہ شہر کے مختلف مسائل کے حل کیلئے اب ضروری ہے کہ فوج اور رینجرز کارکردگی میں بہتری کیلئے صوبائی اداروں پر دباؤ بڑھائیں تاکہ شہر کے مسائل حل ہوسکیں، ان خیالات کا اظہار انھوں نے آج رینجرز 62ونگ کے کمانڈر لیفٹیننٹ کرنل شاہد امیر خان اور تاجروں کے ہمراہ علاقے کی مختلف مارکیٹوں کے دورے کے موقع پر کیا، ان کے ہمراہ میجر عنایت اللہ درّانی، DSRکیپٹن عباس، تاجر نمائیندگان محمد آصف، طارق ممتاز،زبیر علی خان، ندیم احمد، میر عبدالحئی، جنت گُل، طیب علی، سید علاؤلدین، سید شرافت علی، امین ٹی، عبدالقادر، شاہد شمسی،محمد فرید اور دیگر نے بھی مارکیٹوں کا

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

06/03/2015 - 16:37:53 :وقت اشاعت

:متعلقہ عنوان