اہل مدارس کے دہشت گردی کیخلاف تعاون کو کمزوری نہ سمجھا جائے، مفتی محمد نعیم،
بند کریں
تازہ ترین ایڈ یشن کے لیے ابھی کلک کریں
جمعہ فروری

مزید اہم خبریں

وقت اشاعت: 27/02/2015 - 23:28:11 وقت اشاعت: 27/02/2015 - 23:28:11 وقت اشاعت: 27/02/2015 - 23:27:32 وقت اشاعت: 27/02/2015 - 23:27:32 وقت اشاعت: 27/02/2015 - 23:27:32 وقت اشاعت: 27/02/2015 - 23:26:35 وقت اشاعت: 27/02/2015 - 23:26:35 وقت اشاعت: 27/02/2015 - 23:26:35 وقت اشاعت: 27/02/2015 - 23:25:31 وقت اشاعت: 27/02/2015 - 23:25:31 وقت اشاعت: 27/02/2015 - 23:25:31
پچھلی خبریں - مزید خبریں

کراچی

اہل مدارس کے دہشت گردی کیخلاف تعاون کو کمزوری نہ سمجھا جائے، مفتی محمد نعیم،

ایک طرف مذاکرات کی بات تو دوسری جانب مدارس پر پابندیااور حراساں کیاجارہاہے ، بیان

کراچی(اردو پوائنٹ تازہ ترین اخبار. 27 فروی 2015ء) وفاق المدارس العرابیہ پاکستان کی مجلس عاملہ کے رکن و جامعہ بنوریہ عالمیہ کے مہتمم وشیخ الحدیث مفتی محمد نعیم نے کہاکہ ہل مدارس دہشت گردی کے خاتمے کیلئے حکومت کے ساتھ تعاون کررہے ہیں ، دہشت گردی کے خلاف تعاون کو کمزوری نہ سمجھا جائے ، حکومت ایک طرف مذاکرات کی بات کرتی ہے تو دوسری جانب مدارس میں پابندیا عائدکرکے دوغلے پن کا ثبوت دے رہی ہے ، تنظیمات مدارس کے قائد ین کو اعتماد میں لئے بغیر مدارس کو آڈٹ،رجسٹریشن دیگر حیلے بہانوں سے حراساں کرنا بند کیاجائے ،بیرونی ایجنڈے کے تحت ، مدارس،مساجد ، داڑھی اور پگڑی کو دہشت گردوں سے منسوب کرنے کی کوششیں کی جارہی ہیں ، جمعہ کو جامعہ بنوریہ عالمیہ میں علماء کرام کے ایک وفد سے گفتگو کرتے ہوئے مفتی محمد نعیم نے کہاکہ دہشت گردی کی آڑ میں مدارس کے خلاف اقدامات حکومت کی دوغلی پالیسی ہے ، حکومت اہل مدارس کے ساتھ ناروا سلوک بند کرے اگر کوئی مداسہ دہشت گردی میں ملوث ہے تو متعلقہ مدارس کے بورڈ کو اعتماد میں لیکر اس کیخلاف کاروائی کی جائے،انہوں نے کہاکہ دہشت گردی کے اسل اسباب پر توجہ دینے کی بجائے سانحہ پشاور کے بعد نیشنل ایکشن پلان کے تحت دینی مدارس اور علما کو نشانہ بنایاجارہاہے،اور بیرونی ایجنڈے کے تحت مدارس، مساجد ، داڑھی اور پگڑی کو دہشت گردوں سے منسوب

اس خبر کی تفصیل پڑھنے کیلئے یہاں پر کلک کیجئے

27/02/2015 - 23:26:35 :وقت اشاعت

:متعلقہ عنوان