بند کریں
بدھ جنوری

مزید متفرق مضامین

پچھلے مضامین - مزید مضامین
طوطے کی طرح نظرآنے کے جنون میں ایک شخص نے اپنے کان ہی کٹوا دیئے
کبھی کبھی انسان شہرت اور میڈیا کی توجہ حاصل کرنے کے لیے اپنے ہی جسم کے ساتھ ظلم کر بیٹھتا ہے ایسا ہی کچھ کیا امریکا میں شہرت حاصل کرنے کے جنون میں مبتلا شخص نے اور اس نے طوطے کی طرح نظرآنے کی کوشش میں چہرے پر کئی رنگ برنگے ٹیٹوز بنوائے
کبھی کبھی انسان شہرت اور میڈیا کی توجہ حاصل کرنے کے لیے اپنے ہی جسم کے ساتھ ظلم کر بیٹھتا ہے ایسا ہی کچھ کیا امریکا میں شہرت حاصل کرنے کے جنون میں مبتلا شخص نے اور اس نے طوطے کی طرح نظرآنے کی کوشش میں چہرے پر کئی رنگ برنگے ٹیٹوز بنوائے لیکن اس سے بھی بڑھ کر اس نے اپنے کان کٹوا دیئے۔
امریکا کا رہائشی جنونی شخص ٹید رچرڈ چہرے کے نت نئے ڈیزائن بنوانے میں پہلے ہی خاصی شہرت رکھتا ہے لیکن گزشتہ روز تو اس نے بالکل ہی ایک نیا کارنامہ انجام دے کر لوگوں کی بھر پور توجہ حاصل کرلی۔
رچرڈ نے طوطے کی سی شکل اپنانے کے لیے اپنے چہرے پر 110 رنگا رنگ ٹیٹوز بنوائے ، 50 جگہ سے چھدوایا اور زبان کو 2 حصوں میں تقیسم لیکن اس نے یہیں بس نہیں کیا بلکہ اپنے دونوں کان بھی کٹوا لیے تاکہ وہ طوطا ہی لگے۔
دلچسپ بات یہ ہے کہ رچرڈ نے ایک اور قدم آگے بڑھتے ہوئے ایک اور فیصلہ کیا ہے اور وہ ایسے سرجن کی تلاش میں ہے جو اس کی ناک کو طوطے کی طرح موڑ کر لمبی بنادے۔
اس کارنامے پر رچرڈ کا کہنا ہے کہ اس کا یہ روپ اسے بے حد پسند آیا ہے اور اب تک کے دھارے گئے تمام روپ میں یہ سے سب سے بہتر ہے کیوں کہ وہ چاہتا ہے کہ وہ جتنا ممکن ہوسکے اپنے پیارے طوطے کی طرح لگے
رچرڈ کا کہنا تھا کہ اس کے بڑے کان ویسے بھی لوگوں کو اچھے نہیں لگتے تھے اور وہ کافی عرصے سے ان کا مذاق اڑتا ہوا دیکھتا رہا ہے لیکن اس نے یہ کان اس خرابی سے نہیں بلکہ اپنے طوطے کی محبت میں کاٹے ہیں لیکن کان کٹنے کے باوجود وہ اپنے پیارے طوطے کی آواز سن سکتا ہے اور اسکے ساتھ چیٹنگ بھی کرتا ہے۔
رچرڈ ایک جوتے بنانے والی کمپنی میں ملازم ہے اور اس نے سب سے پہلے 1976 میں پہلا ٹیٹو اپنے جسم پر بنایا پھر تو جیسے اس کو اس کا جنون ہی ہوگیا اور اب اس کا سارا جسم اور ہاتھ ٹیٹوز اور مختلف چھیدوں سے بھرے ہوئے ہیں جب کہ اس نے اپنے دونوں ہاتھوں میں سرجری کے ذریعے مقناطیس لگوا رکھے ہیں۔
تاریخ اشاعت: 2015-10-20

(0) ووٹ وصول ہوئے